روس میں گیس دھماکے سے عمارت تباہ ،4 افراد ہلاک ، صدر پوتین کی جائے وقوعہ پر آمد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

روس کے مشرقی شہر میگنیٹوگورسک میں گیس کے دھماکے میں ایک اپارٹمنٹ عمارت تباہ ہوگئی ہے ۔واقعے میں چار افراد ہلاک اور متعدد ملبے تلے دب گئے ہیں۔روسی صدر ولادی میر پوتین تازہ صورت حال کا جائزہ لینے کے لیے جائے وقوعہ پر پہنچ گئے ہیں۔

اُرلس کے علاقے میں واقع اس شہر کے حکام کا کہنا ہے کہ گیس لیک ہونے سے اس عمارت میں دھماکا ہوا تھا جس سے اس کا آدھا حصہ منہدم ہوگیا ہے۔ اس کے بعد سے 68 افراد لاپتا ہیں۔

بی بی سی کی ایک رپورٹ کے مطابق اس عمارت کے 48 فلیٹس گیس دھماکے کے بعد منہدم ہوگئے ہیں۔ان میں 120 افراد رہ رہے تھے۔اب لاپتا افراد کی تلاش کے لیے امدادی سرگرمیوں تیزی سے جاری ہیں جبکہ اس صنعتی شہر میں شدید سردی ہے اور درجہ حرارت منفی 17 سینٹی گریڈ تک گر چکا ہے۔

روس کے ایک نیوز چینل ویستی نے اطلاع دی ہے کہ اس عمارت کے فلیٹوں میں مقیم 52 افراد کا پتا چل چکا ہے۔ان میں مقتولین اور مجروحین دونوں شامل ہیں لیکن 68 افراد ابھی تک لاپتا ہیں اور وہ ملبے تلے دبے ہوئے ہیں۔انھوں نے اس خدشے کا اظہار کیا ہے کہ ان میں سے چند ایک ہی کو ملبے سے زندہ نکالا جاسکے گا۔ میگنیٹوگورسک شہر دارالحکومت ماسکو سے 1695 کلومیٹر ( 1053 میل) دور مشرق میں واقع ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں