.

ایران کی عالمی سلامتی کو دھمکیوں پر امریکا خاموش تماشائی بنے کھڑا نہیں رہے گا:پومپیو

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے کہا ہے کہ ایرانی رجیم کی عالمی سلامتی کو دھمکیوں کے بعد امریکا خاموش تماشائی بنے کھڑا نہیں رہے گا۔

مائیک پومپیو ایران کے بین البر اعظمی بیلسٹک میزائل کے ہم پلہ خلائی شٹل کے تجربے کے منصوبے کا حوالہ دے رہے تھے۔امریکا نے ایران کو خبردار کیا ہے کہ وہ اس منصوبے سے باز آجائے ۔مائیک پومپیو نے جمعرات کو ایک ٹویٹ میں ایران سے کہا ہے کہ وہ بیلسٹک میزائلوں سے متعلق تمام سرگرمیوں سے دستبردار ہوجائے۔

انھوں نے ٹویٹ میں لکھا ہے کہ ’’امریکا ایرانی رجیم کی بین الاقوامی سلامتی اور استحکام کو خطرے سے دوچار کرنے کی تباہ کن پالیسیوں پر خاموش تماشائی بن کر کھڑا دیکھتا نہیں رہے گا‘‘۔

وہ مزید لکھتے ہیں: ’’ہم رجیم کو مشورہ دیتے ہیں کہ وہ اپنی اشتعال انگیز سرگرمیوں پر نظرثانی کرے اور وہ بیلسٹک میزائلوں سے متعلق تمام سرگرمیوں کو منجمد کردے تا کہ وہ مزید معاشی اور سفارتی تنہائی کاشکا ر ہونے سے بچ سکے‘‘۔