.

سوڈان میں جمعرات کے روز ملک گیر مظاہروں کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سوڈان میں پروفیشنلز ایسوسی ایشن اور اپوزیشن کے 3 اتحادوں نے اعلان کیا ہے کہ جمعرات کے روز ملک بھر میں حکومت مخالف احتجاجی ریلیاں نکالی جائیں گی۔ یہ بات بدھ کے روز جاری ایک مشترکہ بیان میں کہی گئی۔

دوسری جانب سوڈانی پولیس کے ترجمان ہاشم علی عبدالرحیم کا کہنا ہے کہ ملک میں حالات پرسکون اور مستحکم ہیں ماسوا دارالحکومت خرطوم اور بعض ریاستوں میں محدود پیمانے پر غیر قانونی مجمعوں کے جن کو قانون کے مطابق منتشر کر دیا گیا۔

اس سے قبل سوڈان کی پولیس نے گزشتہ رات دارالحکومت خرطوم کے شمال میں واقع شہر بحری اور خرطوم کے مغرب میں ام درمان شہر میں ہونے والے مظاہروں کو منتشر کرنے کے لیے آنسو گیس کا استعمال کیا۔ ان مظاہروں کی کال پروفیشنل ایسوسی ایشن اور اپوزیشن نے دی تھی۔

دوسری جانب سوڈان کے صدر عمر البشیر نے قطر کے دارالحکومت دوحہ کے دو روزہ دورے کا آغاز کر دیا ہے۔

سوڈانی ایوان صدر سے جاری بیان کے مطابق البشیر قطر کے امیر شیخ تمیم بن حمد سے ملاقات کریں گے۔ ملاقات میں دو طرفہ تعلقات اور مشترکہ دل چسپی کے امور زیر بحث آئیں گے۔

سوڈان میں ایک ماہ سے زائد عرصے سے جاری عوامی احتجاج اور مظاہروں کے شروع ہونے کے بعد یہ صدر البشیر کا پہلا بیرونی دورہ ہے۔

واضح رہے کہ مذکورہ احتجاجی لہر اٹھنے کے بعد دوحہ نے سوڈان حکومت کے لیے اپنی حمایت کا اعلان کیا تھا۔