.

برطانیہ کے لوگ قطر میں فٹبال عالمی کپ کا انعقاد نہیں چاہتے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ایک بین الاقوامی ادارے کی جانب سے جاری سروے رپورٹ کے مطابق برطانیہ کے لوگوں کی اکثریت نے 2022 کے فٹبال عالمی کپ کے لیے قطر کی میزبانی کو مسترد کر دیا ہے۔ یہ موقف دوحہ کے بدعنوانی کے معاملات میں ملوث ہونے اور انسانی حقوق کی اُن خلاف ورزیوں کے ارتکاب کے پس منظر میں سامنے آیا ہے جن کا انکشاف بین الاقوامی تنظیموں اور میڈیا کی جانب سے سامنے آیا۔

سروے کے مطابق 51% شرکاء نے فٹبال کے آئندہ عالمی کپ کے قطر میں انعقاد کو یکسر مسترد کر دیا ہے۔ اس کے علاوہ 58% برطانویوں نے 2022 کا عالمی کپ اپنے ملک میں کروانے کی حمایت کی ہے جب کہ صرف 8% نے اس پر عدم موافقت کا اظہار کیا۔

واضح رہے کہ انسانی حقوق کی بین الاقوامی تنظیموں نے قطر میں جاری تعمیراتی منصوبوں میں کام کرنے والے ورکروں کے حقوق کی پے درپے خلاف ورزیوں کا انکشاف کیا۔ علاوہ ازیں برطانوی اخبار "گارڈین" کے مطابق قطر میں عالمی کپ کے سلسلے میں زیر تعمیر اسٹیڈیمز میں کام کرنے والے ورکروں کو معمولی اجرت دی جا رہی ہے۔ ان ورکروں کو الم ناک صورت حال کا سامنا ہے اور انہیں کچرے کے ڈھیروں کے بیچ خیموں میں رکھا گیا ہے۔ علاوہ ازیں ان بہت سے لوگوں کو ان کی ماہانہ اجرتوں کی ادائیگی بھی نہیں کی گئی ہے۔