وارسا امن کانفرنس میں‌ امریکا کی فلسطینی اتھارٹی کو شرکت کی دعوت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

امریکا نے فلسطینی اتھارٹی کو پولینڈ کے شہر وارسا میں ہونے والی بین الاقوامی امن کانفرنس میں شرکت کی دعوت دی ہے۔

امریکا کے ایک سینیر عہدیدار نے جمعہ کے روز ایک بیان میں کہا کہ آئندہ ہفتے پولینڈ کی میزبانی میں مشرق وسطیٰ کے حوالے سے منعقد ہونے والی عالمی امن کانفرنس میں فلسطینی حکام کو بھی شرکت کی دعوت دی گئی ہے۔

امریکی حکام کا کہنا ہے کہ وارسا کانفرنس میں مذاکرات نہیں‌ بلکہ صرف اہم امور پر غور کیا جائے گا۔

حکام کا کہنا ہے کہ وارسا کانفرنس میں مشرق وسطیٰ‌ میں ایرانی مداخلت پر نظررکھنے، سائبر خطرات، بیلسٹک میزائلوں کی دوڑ، دہشت گردی کے خلاف جنگ، سیکیورٹی، توانائی، انسانی حقوق اور آبی گذرگاہوں کے تحفظ کے امور کے لیے چھ کمیٹیاں قائم کی جائیں گی۔

اس کانفرنس میں 79 ممالک کے مندوبین شرکت کریں‌ گے۔ اس موقع پر شام کے لیے عالمی مندوب گیر پیڈرسن ایک مختصر رپورٹ بھی پیش کریں گے۔

وارسا امن کانفرنس ایک ایسے وقت میں منعقد کی جا رہی ہے جب دوسری طرف انہی ایام میں روس کے شہر سوچی میں ترکی، ایران اور روس پر مشتمل سربراہ کانفرنس بھی ہوگی جس میں شام میں جاری بحران کے حل پر غور کیا جائے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں