.

سعودی ولی عہد کی ایشیائی ملکوں کے دورے کے اگلے مرحلے میں بھارت آمد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے ولی عہد ، وزیر دفاع اور نائب وزیراعظم شہزادہ محمد بن سلمان ایشیائی ملکوں کے سرکاری دورے کے اگلے مرحلے میں منگل کو بھارت پہنچ گئے ہیں۔ دارالحکومت نئی دہلی کے ہوائی اڈے پر بھارتی وزیراعظم نریندر مودی نے بہ نفس نفیس ان کا خیر مقدم کیا۔

سعودی ولی عہد اپنے دو روزہ قیام کے دوران میں بھارتی قیادت سے انسداد دہشت گردی ، سرمایہ کاری اور توانائی کی سکیورٹی سمیت باہمی دلچسپی کے مختلف موضوعات پر تبادلہ خیال کریں گے۔

شہزادہ محمد بن سلمان میزبان وزیراعظم کے علاوہ بھارتی صدر رام ناتھ کووند اور نائب صدر وینکیا نائیڈو سے بھی ملاقات کریں گے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق نئی دہلی میں متعیّن سعودی سفیر نے کہا ہے کہ ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کا دورہ دونوں ملکوں کے درمیان دوطرفہ تعلقات کے فروغ کے لیے ایک تاریخی موقع فراہم کرتا ہے۔ اس موقع پر دونوں ملکوں کے درمیان تزویراتی شراکت داری کے فروغ کے لیے ایک مشترکہ کونسل کے قیام کا بھی اعلان کیا جائے گا۔اس کے تحت دونوں ممالک کے درمیان باہمی مفاد کے اہم شعبوں میں تعاون کے فروغ کے لیے اقدامات کیے جائیں گے۔

ان شعبوں میں سرمایہ کاری ، توانائی کی سکیورٹی ، انفرااسٹرکچر اور دفاع شامل ہیں۔ دونوں ملکوں میں مختلف شعبوں میں دو طرفہ تعاون سے متعلق مفاہمت کی متعدد یاد داشتوں پر دست خط کیے جائیں گے۔

سعودی ولی عہد نے اس سے پہلےاتوار اور سوموار کو پاکستان کا دورہ کیا ہے جہاں ان کا پُرتپاک خیرمقدم کیا گیا اور ان کی غیر معمولی مہمان نوازی کی گئی ۔ان کے دورے کے موقع پر سعودی عرب اور پاکستان کے درمیان مختلف شعبوں میں دو طرفہ تعاون کے فروغ کے لیے بیس ارب ڈالرز مالیت کے سمجھوتے طے پائے ہیں۔ وہ بھارت کے بعد چین جائیں گے۔