سوڈان پر کوئی بیرونی حل مسلط نہیں کیا جائے گا: امریکا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

امیریکی قومی سلامتی کونسل میں صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے معاون خاص اور افریقا کے امور کے لیے سینئر مشیر سیریل سارٹر کا کہنا ہے کہ سوڈان پر باہر سے کوئی حل مسلط نہیں کیا جائے گا۔

سارٹر کا یہ بیان خرطوم میں سوڈانی صدر کے معاون فیصل حسن ابراہیم سے ملاقات کے بعد سامنے آیا۔ انہوں نے کہا کہ سوڈان اس وقت عبوری مرحلے سے گزر رہا ہے تاہم اس امر کی اشد ضرورت ہے کہ حکومت شہریوں کے پر امن اظہار کے حق کا احترام کرے۔ سارٹر نے مظاہرین سے بھی مطالبہ کیا کہ وہ پر امن رہنے پر کاربند رہیں۔

امریکی عہدے دار کے مطابق مزید صبر کے ذریعے حکومت کوئی سیاسی حل تلاش کرنے میں کامیاب ہو جائے گی اور سوڈان پر باہر سے کوئی حل نہیں تھوپا جائے گا۔

دوسری جانب فیصل حسن ابراہیم نے باور کرایا ہے کہ سوڈان مشترکہ دل چسپی کے تمام امور میں امریکا کے ساتھ بات چیت پر کاربند ہے۔

سیریل سارٹر سوڈان کے دو دن کے دورے پر اتوار کے روز دارالحکومت خرطوم پہنچے تھے

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں