جہاز ہائی جیک کرنے کی ناکام کوشش میں بنگالی شہری ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

بنگلہ دیش سے دبئی جانے والے بیمان ائیرلائنز کے ایک جہاز کو ہائی جیک کرنے کے کوشش کے بعد ہنگامی لینڈنگ کر کے اتار لیا گیا ہے۔ حکام کے مطابق ہائی جیکر کو خصوصی دستوں نے ایک آپریشن کے بعد ہلاک کر دیا ہے۔

بنگلہ دیشی فوج کے میجر جنرل مطیع الرحمن نے صحافیوں کو بتایا کہ ہائی جیکر نے خود کو سکیورٹی فورسز کے حوالے کرنے سے انکار کر دیا اور فائر کھول دیا جس کے بعد کمانڈوز کے ساتھ مقابلے کے دوران اس کی ہلاکت ہو گئی۔

میجر جنرل مطیع الرحمن نے بتایا کہ اس آپریشن کی قیادت کرنل امرل کر رہے تھے اور صورتحال پر آٹھ منٹ کے اندر قابو پا لیا گیا۔ انھوں نے اس ہائی جیکر کا نام ’مہدی‘ بتایا۔

خبر رساں ادارے اے ایف پی نے سکیورٹی ذرائع کے حوالے سے بتایا کہ ایک مشتبہ شخص نے زبردستی کاک پٹ میں داخل ہونے کی کوشش کی تھی جس کے بعد ہنگامی لینڈنگ کرنا پڑی۔

بنگلہ دیش کی سول ایوی ایشن اتھارٹی کے سربراہ ائیر وائس مارشل نعیم حسن نے واقعے کے بعد ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ مبینہ ہائی جیکر نے جہاز کے پائلٹ کے سر پر پستول تانی اور کہا کہ ان کی بیوی کے ساتھ کچھ مسئلہ ہے اور وہ اس بارے میں بنگلہ دیشی وزیر اعظم شیخ حسینہ سے بات کرنا چاہتے ہیں۔ انھوں نے مزید کہا کہ کہ ہائی جیکر کا دماغی توازن ٹھیک نہیں تھا۔ ڈھاکا سے دبئی جانے والے اس طیارے پر 142 مسافرسوار تھے اور اغوا کرنے کی کوشش کے بعد اسے ساحلی شہر چٹاگانگ کے شاہ امانت ائیرپورٹ پر اتار لیا گیا۔\

سوشل میڈیا پر پوسٹ کی جانے والی تصاویر میں دیکھا جا سکتا ہے کہ بہت سے لوگ دور سے بوئنگ 737-800 کو ایئر پورٹ کے رن وے پر کھڑا دیکھ رہے ہیں۔ بیمان بنگلہ دیش ائیرلائنز کی پرواز بی جے 147 کے اس طیارے پر سوار تمام تر مسافروں کو بحفاظت جہاز سے اتارنے کے بعد طیارے کو حصار میں لے لیا گیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں