زیرآب قدرتی گیس کے وسائل پر مصر اور سوڈان میں تنازع

خرطوم میں متعین مصری سفیر کی دفتر خارجہ طلبی اور احتجاج

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سوڈان کی سمندری حدود میں زیرآب قدرتی گیس کے وسائل کو استعمال میں لانے کے مصری اعلان کے بعد قاہرہ اور خرطوم کےدرمیان نئی کشیدگی پیدا ہوگئی ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق مصری وزارت پٹرولیم اور معدنی وسائل کی طرف سے سوڈان کے زیرانتظام بحر الاحمر میں زیرآب قدرتی گیس کے وسائل کی تلاش کے لیے عالمی ٹینڈر کھولنے کے اعلان کے بعد خرطوم میں تعینات مصری سفیر حسامع عیسیٰ کو دفتر خارجہ میں طلب کرکے سخت احتجاج کیا گیا۔

سوڈان کےسیکرٹری خارجہ بدرالدین عبداللہ نے کہا کہ ہم نے اپنی سمندری حدود میں گیس کی تلاش کے مصری اعلان پر قاہرہ کے خلاف احتجاج کیا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ مصری حکومت کا بیان حلائب مثلث کے قانونی اسٹیٹس کو نقصان پہنچانے اور سوڈان کی سمندری حدود میں مداخلت کے مترادف ہے۔

سوڈانی وزارت خارجہ کا کہنا ہے کہ عالمی قانون کے تحت مصری وزارت پٹرولیم سوڈان کے حصے میں آنے والے سمندری علاقے میں کسی قسم کا کوئی منصوبہ شروع کرنے کا مجاز نہیں۔

سوڈان نے دوسرے ممالک پر بھی زور دیا کہ وہ مصر کو سوڈان کی سمندری حدودو میں مداخلت سے باز رکھنے کے لیے موثر اقدامات کریں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں