.

صومالیہ : مصروف شاہراہ پر بم دھماکے میں 11 افراد ہلاک ، 16 زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

صومالیہ کے دارالحکومت مقدیشو جمعرات کو ایک مصروف شاہراہ پر بم دھماکے میں گیارہ افراد ہلاک اور سولہ زخمی ہوگئے ہیں۔

عینی شاہدین کے مطابق شہر کی مصروف شاہراہ مکہ المکرمہ پر واقع ایک ریستوراں کے باہر بم دھماکا ہوا ہے۔اس وقت بڑی تعداد میں لوگ ریستورا ں میں دوپہر کا کھانا کھا رہے تھے۔ان میں متعدد افراد ہلاک اور زخمی ہوگئے ہیں۔

عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ زور دار بم دھماکے سے متعدد کاریں اور تین پہیوں والی موٹر بائیکس تباہ ہوگئی ہیں۔ فوری طور پر کسی گروپ نے اس بم دھماکے کی ذمے داری قبول نہیں کی ہے لیکن القاعدہ سے وابستہ الشباب کے جنگجو دارالحکومت مقدیشو اور دوسرے علاقوں میں آئے دن سرکاری سکیورٹی فورسز یا حکومتی عہدے داروں پر خودکش بم حملے کرتے رہتے ہیں۔

صومالیہ میں 1991 سے خانہ جنگی جاری ہے ۔ تب سے طوائف الملوکی کا دور دورہ ہے اور ریاستی ادارے تباہ ہوچکے ہیں۔2006ء میں القاعدہ سے وابستہ الشباب کے جنگجوؤں نے کمزور مرکزی حکومت کے خلاف مسلح بغاوت برپا کردی تھی اور انھوں نے بہت سے علاقوں پر قبضہ کر لیا تھا۔2011ء کے بعد صومالی فورسز نے ان کے زیر قبضہ بیشتر علاقے واپس لے لیے ہیں ۔اس کے ردعمل میں انھوں نےگوریلا جنگ شروع کررکھی ہے۔