.

ایرانی ہیکروں کا برطانیہ کے مختلف اداروں کے بنیادی ڈھانچے پر سائبر حملہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

برطانوی ذرائع ابلاغ کے مطابق ایرانی پاسدارن انقلاب سے منسلک ہیکروں مملکت کے مرک۔۔۔ ی بنیادی ڈنھانچے پر سائبرحملہ کیا ہے جس کے نتیجے میں اداروں کے بنیادی ڈھانچے کو نقصان پہنچا ہے۔

'اسکائی نیو' کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ برس دسمبر میں ایرانی پاسداران انقلاب کے ہیکروں نے ارکان پارلیمان اور سیاسی رہ نمائوں کے اسمارٹ فون کو سائبرحملے کا نشانہ بنا کر ان کا ڈیٹا چوری کرنے کی کوشش کی تھی۔

اسی طرح ایرانی ہیکروں نے سال نو کے موقع پر اسپیشل سیکٹر کی کمپنیوں جن میں بنک بھی شامل تھے کو نشانہ بنایا۔ ان حملوں‌کا سلسلہ بند نہیں ہوا بلکہ بدستور جاری ہے۔

'اسکائی نیو۔۔ کے مطابق 23 دسمبر 2018ء کو ایرانی ہیکروں نے ڈاک کے محکمے، لوکل گورنمنٹ کے آن لائن نیٹ ورک اور مختلف کمپنیوں پر سائبرحملہ کیا۔

برطانیہ کے نیشنل سائبر سیکیورٹی سینٹر کے مطابق ادارے کو سال 2018ء کے آخر میں ایرانی ہیکروں کی جانب سے کئےگئے حملے کا علم ہے۔ ادارہ متاثرہ کمپنیوں اور افراد کے ساتھ سائبرحملے کے نقصانات کم کرنے کے لیے صلاح مشورہ کررہا ہے۔

سائبر حملوں میں ایرانی ہیکروں نے برطانیہ کے ان لائن ڈاک سسٹم، ہزاروں ملازمین کا موبائل ڈیٹا چوری کرنےاور کئی کمپنیوں کو غیرمعمولی نقصان سے دوچار کیا ہے۔