عرب اتحاد کا یمنی دارالحکومت صنعاء میں حوثیوں کی ڈرون فیکٹری پر فضائی حملہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کی قیادت میں عرب اتحاد کے لڑاکا طیاروں نے یمنی دارالحکومت صنعاء میں حوثی شیعہ باغیوں کے ٹھکانوں پر بمباری کی ہے اور ان کی جنگی تنصیبات کو نشانہ بنایا ہے۔

عرب اتحاد کے ترجمان کرنل ترکی المالکی نے بدھ کو ایک بیان میں کہا ہے کہ لڑاکا طیاروں نے حوثیوں کے ڈرون تیار کرنے والے ایک پلانٹ اور ایک اسٹور پر بمباری کی ہے۔فوری طور پر فضائی حملے میں کسی ہلاکت کی کوئی اطلاع نہیں ہے۔

انھوں نے کہا کہ نئے فضائی حملے یمن میں حوثی ملیشیا کے خلاف کارروائی ہی کی توسیع ہیں جس کے تحت ان کی لاجسٹیکل صلاحیتوں کے مربوط نیٹ ورک، مسلح ڈرونز اور غیر ملکی ماہرین کی موجودگی کے مقامات کو تباہ کیا جارہا ہے۔

کرنل ترکی المالکی نے عرب اتحاد کے اس عزم کا اعادہ کیا کہ حوثی ملیشیا کو ان جدید جنگی صلاحیتوں کو استعمال کرنے سے باز رکھا جائے گا،شہریوں کے تحفظ کے لیے تمام ضروری اقدامات کیے جائیں گے اور اہم تنصیبات اور علاقوں کو ڈرونز کے حملوں کے خطرے سے محفوظ کیا جائے گا۔

انھوں نے واضح کیا کہ عرب اتحاد کی یمن میں جنگی کارروائیاں بین الاقوامی قانون اور روایات کے عین مطابق ہیں اور اتحاد کی مشترکہ کمان شہریوں کے تحفظ کے لیے پیشگی حفاظتی اقدامات کرتی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں