.

اسرائیل کا خلائی جہاز چاند کی سطح پر گر کر تباہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اسرائیل کی جانب سے چاند کی سطح پر بھیجا جانے والا خلائی جہاز جمعرات کے روز حادثے کا شکار ہو گیا۔ تفصیلات کے مطابق خلائی جہاز Beresheet چاند پر اترنے کے آخری مرحلے کے دوران تکنیکی مسائل سے دوچار ہوا۔

اس سلسلے میں سپورٹ ٹیم کا کہنا ہے کہ یہ خلائی جہاز انسانوں سے خالی تھا ،،، اس کو چاند پر اترنے کے عمل کے دوران بار بار انجن اور کمیونی کیشن کے حوالے سے مسائل کا سامنا رہا۔ اس آخری مرحلے میں تقریبا 21 منٹ لگ گئے۔

یاد رہے کہ Beresheet نامی یہ خلائی جہاز تقریبا سات ہفتوں تک خلا میں محو سفر رہا۔ اس دوران وہ زمین کے گرد مدار میں دھیرے دھیرے آگے بڑھتا رہا۔

یہ جہاز بدھ کے روز چاند کے گرد بیضوی مدار میں داخل ہوا تھا۔ چاند کی سطح سے 15 سے 17 کلو میٹر دور رہ جانے کے بعد خلائی جہاز کو سنگین نوعیت کے تکنیکی مسائل کا سامنا ہوا۔ بعد ازاں وہ چاند کی سطح پر گر کر تباہ ہو گیا۔

اب تک صرف تین ممالک امریکا، سابق سوویت یونین اور چین چاند کی سطح پر اترنے کا کامیاب مشن انجام دے چکے ہیں۔