خرطوم دھرنا: دو شہریوں سمیت ملڑی پولیس کا افسر گولی لگنے سے ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سوڈان کی عبوری فوجی کونسل نے دارلحکومت خرطوم میں رات گئے ہونے والے مظاہروں میں ملڑی پولیس کے ایک افسر سمیت دو عام شہری گولی لگنے سے ہلاک ہو گئے۔

ایک بیان میں کونسل نے الزام عائد کیا کہ سیاسی مفاہمفت سے نالاں گروہ نے مظاہرے کے مقام پر فائرنگ کی اور تشدد پر اکسایا۔

اس سے قبل برطانوی خبر رساں ادارے ’’رائیٹرز‘‘ نے بتایا تھا کہ پیر کے روز خرطوم میں دیئے جانے والے احتجاجی دھرنے کے قریب والی فائرنگ میں کم سے کم 10 افراد زخمی ہوئے۔ مقامی ڈاکٹروں کا کہنا تھا کہ زخمیوں میں بعض کی حالت نازک ہے۔

خرطوم کے وسطی علاقے سے فارئنگ کی آوازیں سنائی دے رہی تھیں۔ فائرن کا سلسلہ اس وقت شروع ہوا جب سیکیورٹی اور نیم فوجی دستوں کا مظاہرین کے ساتھ اس وقت تصادم ہوا جب مظاہرین سڑکوں پر رکاوٹیں کھڑی کر رہے تھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں