سوڈان : عسکری عبوری کونسل کا ایک اہم رکن مستعفی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سوڈان میں عسکری عبوری کونسل کے رکن جنرل مصطفی محمد مصطفی نے جمعرات کے روز اپنے منصب سے مستعفی ہونے کا اعلان کیا ہے۔ وہ ملٹری انٹیلی جنس کے ڈائریکٹر بھی رہ چکے ہیں۔ استعفے کی وجوہات کے بارے میں تفصیلات نہیں بتائی گئیں۔

جنرل مصطفی متعدد یونٹوں میں کام کر چکے ہیں۔ انہوں نے ایک طویل عرصے تک انٹیلی جنس اداروں میں کام کیا اور پھر 2017 میں جنرل جمال عمر کی سبک دوشی کے بعد انٹیلی جنس کی انتظامی باگ ڈور سنبھالی۔

یہ پیش رفت ایسے وقت میں سامنے آئی ہے جب عسکری عبوری کونسل اور ڈیکلریشن آف فریڈم اینڈ چینج فورسز کے درمیان خود مختار کونسل کی تشکیل کے حوالے سے مذاکرات جمود کا شکار ہیں۔ عبوری کونسل ،،، خود مختار کونسل کی سربراہی کے لیے کسی بھی سویلین شخصیت کی نامزدگی کو مسترد کر چکی ہے۔

گزشتہ ماہ 30 اپریل کو سوڈان میں عبوری عسکری کونسل نے اپنے 3 ارکان کے استعفے منظور کرنے کا اعلان کیا تھا۔ ان میں سیاسی کمیٹی کے سربراہ بھی شامل ہیں۔


مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں