.

افغانستان: طالبان کے دو حملوں میں افغان سکیورٹی فورسز کے 23 اہل کار ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

افغانستان کے مشرقی اور مغربی علاقوں میں طالبان کے افغان سکیورٹی فورسز کے چیک پوائنٹس پر حملوں میں 23 اہل کار ہلاک ہوگئے ہیں۔

مغربی صوبہ غور کے گورنر کے ترجمان عبدالہادی خطیبی نے بتایا ہے کہ صوبائی دارالحکومت فیروز کوہ کے نزدیک مسلح مزاحمت کاروں نے سوموار کی شب ایک چیک پوائنٹ پر حملہ کیا تھا۔اس کے بعد ان کے درمیان کئی گھنٹے تک جھڑپ ہوتی رہی ہے۔اس میں پولیس اورحکومت نواز ملیشیا کے 18 ارکان مارے گئے ہیں اور سات زخمی ہوگئے ہیں۔

فوری طور پر کسی گروپ نے اس حملے کی ذمے داری قبول نہیں کی تھی۔ادھر مشرقی صوبے لوگر میں مزاحمت کاروں نے ضلع برکی بارک میں واقع فوج کے ایک چیک پوائنٹ پر دھاوا بول دیا ۔ صوبائی کونسل کے ایک رکن محمد ناصر غیرت کے مطابق اس حملے میں پانچ فوجی ہلاک اور چار زخمی ہوگئے ہیں ۔

انھوں نے مزید بتایا ہے کہ طالبان نے چار فوجیوں کو پکڑ لیا ہے اور وہ چیک ہوائنٹ سے ایک حموی گاڑی اور اسلحہ بھی لوٹ کر لے گئے ہیں۔طالبان ہی نے ایک بیان میں لوگر میں اس حملے کی ذمے داری قبول کی ہے۔