.

نائیجیریا میں صدر کا عہدہ سنبھالنے کی تقریب صدر کے بغیر!

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

نائجیریا کے ناب صدر ییمی اوسنباجو کا کہنا ہے کہ اُن کا ملک صدر محمد بخاری کے دور میں "اپنی تاریخ کا بہترین وقت" گزارنے کی تیاری کر رہا ہے۔ اوسنباجو نے یہ بات بوہاری کے دوسری مرتبہ انتخابات میں کامیاب ہونے کے بعد بدھ کی شب رات گئے منعقد ہونے والے عشائیے میں کہی جو کہ صدر کے عہدہ سنبھالنے کے سلسلے میں دیا گیا تھا۔ صدر بوہاری اس عشائیے میں شریک نہیں ہو سکے۔

سال 2015 سے اقتدار سنبھالنے والے 76 سالہ بخاری کی صحت کے حوالے سے بہت سے سوالات جنم لے رہے ہیں۔ رواں سال فروری میں انہیں دوبارہ ملک کا صدر منتخب کر لیا گیا۔

بخاری نے 2016 اور 2017 میں علاج کی غرض سے کئی ماہ ملک سے باہر گزارے تاہم ان کی بیماری کے بارے میں تفصیلات نہیں بتائی گئیں۔

مذکورہ عشائیہ بدھ کے روز بخاری کے حلف اٹھانے کے چند گھنٹے بعد دارالحکومت ابوجا میں منعقد ہوا۔ بخاری نے حلف اٹھانے کی تقریب سے خطاب نہ کر کے بعض حلقوں کو حیران کر دیا۔

پیر کے روز سرکاری ٹی وی پر نشر ہونے والے ایک انٹرویو میں صدر بخاری نے ایک بار پھر سیکورٹی خطرات کا مقابلہ کرنے اور بدعنوانی کا قلع قمع کرنے کا عزم ظاہر کیا۔

نائجیریا کے ایوان صدارت کے ایک ذمے دار نے بتایا کہ صدر بخاری جمعرات کے روز سعودی عرب روانہ ہو گئے جہاں وہ جمعے کے روز مکہ مکرمہ میں اسلامی تعاون تنظیم کے سربراہ اجلاس میں شرکت کریں گے۔

بوہاری 2 جون کو نائجیریا واپس آئیں گے۔