.

لیبیا کے معیتیقہ ہوائی اڈے پر ڈرون کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر فضائی حملے میں تباہ

بمباری مشرقی لیبیا میں جنرل خلیفہ حفتر کی وفادار فوج کے زیر کمان فضائیہ نے کی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مشرقی لیبیا میں جنرل خلیفہ حفتر کی وفادار فوج نے معیتیقہ ہوائی اڈے پر قومی وفاق حکومت کے ڈرون کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر پر بمباری کر کے اسے تباہ کردیا۔

لیبی فوج کے ترجمان میجر جنرل احمد المسماری نے نیوز کانفرنس کو بتایا ’’کہ معیتیقہ ہوائی اڈے کے اندر قائم ڈرون ریمورٹ کنٹرول مرکز تباہ کر دیا گیا ہے۔

ادھر معیتیقہ ہوائی اڈے کے حکام نے سماجی رابطوں‌ کی ویب سائٹ فیس بک پر ایک بیان پوسٹ‌ کیا ہے جس میں‌ کہا گیا ہے کہ دارالحکومت طرابلس میں‌ بمباری کے واقعے کے بعد ہوائی اڈے پر پروازوں کی آمد ورفت روک دی ہے۔

معیتیقہ ہوائی اڈے کو پہلے ہی بین الاقوامی پروازوں کے لیے بند کر دیا گیا تھا تاہم اندرون ملک پروازوں کے ساتھ ترکی، اردن اور تیونس کے لیے اس ہوائی اڈے سے پروازیں جاری رہی ہیں۔

لیبی فوج نے جب سے طرابلس کا قبضہ حاصل کرنے کے لیے فوجی آپریشن کا آغاز کیا ہے معیتیقہ ہوائی اڈے پر فلائٹ آپریشن متعدد بار تعطل کا شکار ہوا ہے۔ ہوائی اڈے پر جنرل خلیفہ حفتر کی زیر کمان فوج بھی بمباری کرتی رہی ہے۔