انڈونیشیا: شدید زلزلے کے بعد سونامی وارننگ جاری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

انڈونیشیا میں ہفتے کے روز ذمے داران نے بتایا ہے کہ جزائرِ جاوا کے ساحل کے نزدیک جمعے کی شام زور دار زلزلہ آنے کے نتیجے میں کم از کم ایک شخص ہلاک اور متعدد زخمی ہو گئے۔ زلزلے کے بعد حکام کی جانب سے سونامی کی وارننگ جاری کر دی گئی تھی جو چند گھنٹوں بعد واپس لے لی گئی۔

ریکٹر اسکیل پر زلزلے کی شدت 6.9 تھی۔ اس کے نتیجے میں متاثرہ علاقے کے لوگ بھاگ کر اونچے مقامات پر چلے گئے جب کہ دارالحکومت جکارتہ میں شہریوں کی ایک بڑی تعداد سڑکوں پر آ گئی۔

حکام نے ہفتے کے روز بتایا کہ زلزلہ آنے پر حرکت قلب بند ہونے کے نتیجے میں ایک 48 سالہ خاتون فوت ہو گئی۔ علاوہ ازیں چار افراد زخمی ہوئے۔ اس دوران ایک ہزار سے زیادہ افراد کو متاثرہ علاقے سے نکال کر عبوری پناہ کے مراکز پہنچایا گیا۔ ان میں پڑوسی جزیرے سماٹرا کے رہنے والے لوگ بھی شامل ہیں۔

انڈونیشیا میں قدرتی آفات سے نمٹنے والی سرکاری ایجنسی کے مطابق زلزلے کے سبب 100 عمارتوں کو نقصان پہنچا جب کہ 34 کے قریب گھر تباہ ہو گئے۔

گذشتہ برس 7.5 شدت کے زلزلے کے بعد سونامی کے نتیجے میں سولاویسی جزیرے کے علاقے بالو میں 2200 سے زیادہ افراد ہلاک اور ہزاروں لا پتہ ہو گئے تھے۔

دسمبر 2004 میں سماٹرا کے ساحل کے نزدیک 9.1 شدت کا تباہ کن زلزلہ آیا تھا۔ اس کے سبب سونامی کے طوفان کے نتیجے میں بحیرہ ہند کے علاقے میں لاکھوں افراد اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے۔ ان میں 1.7 لاکھ ہلاکتیں انڈونیشیا میں واقع ہوئیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں