.

مراکش: معصوم بچی آگ کی شعلوں کی نذر، لوگ تماشا دیکھتے رہے!

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مراکش میں اتوار کے روز ایک مکان میں لگنے والی آگ نے چار سالہ بچی کو زندہ جلا ڈالا۔ لوگوں کی بڑی تعداد گھر کےباہر جمع ہوگئی۔معصوم بچی ان کی آنکھوں کے سامنے آگ کی شعلوں کی لپیٹ میں رہی مگر لوگ اسے نہیں بچا سکے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق یہ المناک واقعہ اتوار کی شام مراکش کے شمالی علاقے سیدی علال البحراوی میں پیش آیا۔

بچے کے آگ میں زندہ جلنے کی ایک فوٹیج بھی سامنے آئی ہے جس میں بچی کو گھر میں لگنے والی آگ کے بعد کھڑی کی طرف بھاگنے اور جان بچانے کی ناکام کوشش کرتے دیکھا جا سکتا ہے۔ ننھی جان نے خود کو بچانے کی بہت کوشش کی مگر کھڑی کے سامنے لگی آہنی باڑ نے اسے وہاں سے نہ نکلنے دیا اور وہ ادھر ہی لٹک گئی۔ آگ کے بے رحم شعلوں نے اسے جلا کر بھسم کردیا۔ لوگ ننھی بچی کی چیخ پکار سنتے رہے مگر اس کی مدد کو کوئی نہ پہنچ سکا اور نہ بروقت فائر بریگیڈ کا عملہ اس تک پہنچ پایا۔

بچی کو بری طرح جھلس جانے کے بعد نیم مردہ حالت میں اسپتال لے جایا گیا مگر وہ جاں بر نہ ہوسکی اور دم توڑ گئی۔ گھرمیں آتش زدگی کی وجہ معلوم نہیں ہوسکی۔ معصوم بچی کی المناک موت کی خبر نے پوری مراکشی قوم کو دکھی کردیا۔ لوگ دور سے اس پر پانی پھینکنے کی کوشش کرتے رہے مگر سیڑھی کی مدد سے اس تک پہنچنے اور اسے بچانے کی کوئی کوشش نہیں کی گئی۔ حادثے کے وقت اس کے گھر میں کوئی دوسرا فرد موجود نہیں تھا۔