.

صدر ٹرمپ نے"NBC" کے نامہ نگار کو جھڑک دیا، چینل پر طرف داری کا الزام

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور بعض ٹی وی چینلوں کے درمیان محاذ آرائی کی خبریں تواتر کے ساتھ آتی رہتی ہیں۔

گذشتہ روز بھی ایسا ہی ایک واقعہ عالمی میڈیا کی توجہ کا مرکز بن گیا جب وائٹ ہائوس میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب میں صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے "NBC" چینل کے نامہ نگار پیٹر الیکذنڈر کو ایک سوال پر جھڑک ڈالا۔ صدر ٹرمپ نے صحافی اور چینل پر فاش جانب داری کا الزام عاید کیا۔

وائٹ ہائوس میں پریس کانفرنس میں پہلے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے چین سے تجار اور دیگر موضوعات پرسوالوں کے جواب دیے۔ بعد ازاں انہوں نے امریکی ذرائع ابلاغ پر کڑی تنقید کی۔

صدر ٹرمپ نے کہا کہ 'این بی سی' چینل کا یہ نامہ نگار پرلے درجے کا طرف دار ہے۔ پہلے پہل میں اسے بہت پسند کرتا تھا مگر اب اس کی جانب داری کی وجہ سے اس سے نفرت کرتا ہوں۔

صدر ٹرمپ نے کہا کہ 'مسٹر پیٹر آپ چاہئیں تواس سے بہتر سوال پوچھ سکتے ہیں مگر آپ ایسا ہرگز نہیں کریں گے کیونکہ اب آپ جانب دار ہیں۔ اسی وجہ سے تو میں ذرائع ابلاغ پراعتبار نہیں کرتا'۔

اس کے بعد صدر ٹرمپ نے اخبار نیویارک ٹائمز پر تنقید کی اور کہا کہ نیویارک ٹائمز سچائی کا دامن چھوڑ چکا ہے۔ اس اخبار نے سنہ 2016ء کے امریکی صدارتی انتخابات میں روس کی مبینہ مداخلت کے معاملے میں الجھ کر خود کو متنازع بنا دیا۔