.

اسرائیل کے نابود ہونے کا دن کوئی زیادہ دور نہیں: ایرانی آرمی چیف

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ایرانی آرمی کے کمانڈر میجر جنرل عبدالرحیم موسوی نے اپنے طور پر’’ پیشین گوئی‘‘ کی ہے کہ اسرائیل کا خاتمہ قریب ہے۔ انھوں نے خبردار کیا ہے کہ اگر خطے میں کوئی بھی کشیدگی پیدا ہوتی ہے تو اس سے ’’دشمن‘‘ سب سے زیادہ غیرمحفوظ صورت حال سے دوچار ہوجائیں گے۔

ایران کی نیم سرکاری خبررساں ایجنسی تسنیم کے مطابق جنرل عبدالرحیم موسوی نے ہفتے کے روز ایک بیان میں کہا:’’ہر کوئی صہیونی نظام کا جلد خاتمہ دیکھے گا اور یہ دن کوئی زیادہ دور نہیں۔‘‘

انھوں نے یہ بھی دعویٰ کیا ہے کہ ’’مزاحمتی محاذ امریکا اورسامراج نظام کا دھڑن تختہ کردے گا۔‘‘

واضح رہے کہ ایران ’’مزاحمتی محاذ‘‘ کی اصطلاح دنیا بھر میں اسلامی جمہوریہ اور اس کی آلہ کار تنظیموں کے لیے استعمال کرتا ہے۔بالعموم یہ اصطلاح لبنان کی شیعہ ملیشیا حزب اللہ کے لیے استعمال کی جاتی ہے۔

جنرل موسوی نے کہا:’’ دشمن اس بات سے بخوبی آگاہ ہیں کہ خطے میں کوئی بھی کشیدگی اور عدم تحفظ انھیں سب سے غیرمحفوظ صورت حال سے دوچار کردے گا۔‘‘

ان کا کہنا تھا کہ ’’امریکا صرف اس وقت تک ہی کسی ملک کی حمایت کرتا ہے جب تک وہ اس کے مفادات کا تحفظ کرتا ہے۔امریکا نے اپنے انتہائی دباؤ کی پالیسی کے ذریعے ایران کو ’’توڑنے‘‘ کی کوشش کی ہے لیکن وہ اس میں ناکام رہا ہے اور آج امریکا ’کنفیوز‘ ہے‘‘۔