.

تیونس :عدالت کا صدارتی امیدوار نبیل قروی کو بدستور جیل میں رکھنے کا حکم

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

تیونس میں ایک عدالت نے صدارتی امیدوار نبیل قروی کی جیل سے رہائی کی اپیل مسترد کردی ہے اور انھیں بدستور زیر حراست رکھنے کا حکم دیا ہے۔

نبیل قروی تیونس کی میڈیا اندسٹری کی ایک بڑی شخصیت ہیں اور وہ ایک ٹیلی چینل کے مالک ہیں۔ ان پر ٹیکس چوری اور منی لانڈرنگ کے الزام میں مقدمہ چلایا جارہا ہے اور ابھی عدالت نے ان کے خلاف اس کا حتمی فیصلہ نہیں سنایا ہے۔ وہ گذشتہ ماہ تیونس میں منعقدہ صدارتی انتخابات کے پہلے مرحلے میں دوسرے نمبر پر رہے تھے۔

تیونس کے الیکشن کمیشن نے انھیں اس مقدمے کے باوجود صدارتی انتخابات کے دوسرے مرحلے میں حصہ لینے کی اجازت دے دی ہے اور کہا ہےکہ وہ اپنے خلاف عدالت کے فیصلے تک انتخاب لڑسکتے ہیں۔

صدارتی انتخاب کے دوسرے مرحلے کے لیے پولنگ 13 اکتوبر کو ہوگی۔نبیل قروی کا مقابلہ پہلے مرحلے میں سب سے زیادہ ووٹ لینے والے صدارتی امیدوار قانون کے ریٹائرڈ پروفیسر قیس سعید سے ہوگا۔