.

سعودی آرامکو کے حصص کی اداروں کو فروخت کے لیے بولیوں کی رقم 189 ریال سے متجاوز

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کی تیل کی بڑی کمپنی آرامکو کے حصص کی پہلی مرتبہ فروخت (آئی پی او) کے لیے اداروں کی جانب سے 189۰04 ارب ریال (50۰4 ارب ڈالر) کی پیش کشیں موصول ہوئی ہیں۔

سعودی آرامکو کے حصص کی اداروں کو فروخت کے لیے پیش کشوں کی وصولی کا 17 نومبر کو آغاز ہوا تھا اور مالیاتی ادارے آج 4 دسمبر تک حصص خرید کرنے کے لیے بولیاں دے سکتے ہیں۔

آرامکو کے حصص کی سعودی اسٹاک مارکیٹ (تداول) کے ذریعے ابتدائی فروخت کے لیے اداروں کی جانب سے بھرپور دلچسپی کا اظہار کیا گیا ہے۔آرامکو کے مالی مشیروں سامبا کیپٹل ، این سی بی کیپٹل اور ایچ ایس بی سی سعودی عرب کے مطابق کمپنی کو ادارہ جاتی خریداروں کی جانب سے قریباً 6 ارب 30 کروڑ حصص کی خرید کے لیے آرڈر وصول ہوئے ہیں۔

سعودی آرامکو تداول کے ذریعے اپنے ڈیڑھ فی صد حصص فروخت کے لیے پیش کررہی ہے جبکہ نصف فی صد حصص چھوٹے یا انفرادی سرمایہ کاروں کے لیے مختص کیے گئے ہیں۔باقی حصص ادارہ جاتی سرمایہ کاروں جیسے بنکوں اور خود مختار مالیاتی اداروں کو فروخت کیے جارہے ہیں۔

سعودی آرامکو کے ابتدائی حصص کی فروخت کے لیے پراسپیکٹس کے مطابق کمپنی کے اثاثوں کا تخمینہ 16 سے17 کھرب ڈالر لگایا جائے گا اور اس کے ایک حصص کی قیمت 30 سے 32 ریال (8 سے 8۰53 ڈالر) مقرر کی جائے گی۔البتہ حتمی قیمت کا اعلان پانچ دسمبر جمعرات کو کیا جائے گا۔

العربیہ کے تخمینے کے مطابق آرامکو کو حصص کی ابتدائی فروخت سے 25 ارب 60 کروڑ ڈالر کے لگ بھگ رقم حاصل ہوگی۔اگر اتنی یا اس سے زیادہ رقم حصص کی فروخت سے حاصل ہوتی ہے تو آرامکو چین کی ای کامرس فرم علی بابا کا ریکارڈ توڑ دے گی۔علی بابا نے 2014ء میں اپنے حصص کی ابتدائی فروخت سے 25 ارب ڈالر کی رقم حاصل کی تھی۔