.

قزاقستان میں حادثے کا شکار طیارے میں شیر خواربچہ معجزانہ طور پر محفوظ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

دو روز قبل وسط ایشیائی ریاست قزاقستان میں حادثے کا شکار ہونےوالے ایک مسافر طیارے میں زندہ بچ جانے والوں میں ایک شیر خواربچہ بھی شامل ہے۔ اس حادثے میں 14 مسافر جاں بحق اور درجنوں شدید زخمی ہوگئے تھے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق طیارے کے حادثے کے بعد ریسکیو حکام نے اس کے ملبے سے ایک شیرخوار کو نکالا۔ کم سن بچےکو طیارے سے نکالے جانے کی ایک ویڈیو بھی سوشل میڈیا پروائرل ہے۔ ایک ریسکیو اہلکار بچے کو ملبےسے نکال کر تیزی کےساتھ ایمبولینس کی جانب لے جا رہا ہے۔ یہ معلوم نہیں ہوسکا کہ بچے کی صحت کیسی ہے تاہم ذرائع کا کہنا ہے کہ بچہ اس الم ناک حادثے میں معجزانہ طورپر بچ گیا ہے۔

حکام نے طیارے کے حادثے میں دہشت گردی کے محرک کی تردید کی ہے اور کہا ہے کہ غالب امکان یہ ہے کہ طیارہ فنی خرابی یا پائلٹ کی غلطی کی وجہ سے حادثے کا شکار ہوا ہے۔

سول ایوی ایشن کمیٹی کے مطابق حادثے میں ہلاک ہونے والوں کی تعداد بڑھ کر 14 ہوگئی ہے۔اس میں عملہ کے پانچ افراد کے علاوہ 95 مسافر سوار تھے۔

یہ طیارہ آلماتے شہر سے قزاقستان کے دارالحکومت نور سلطان جا رہا تھا۔ تاہم اڑان بھرنے کے دوران ہی طیارے کا توازن بگڑ گیا اور تھوڑی دیر کے بعد ہی وہ نیچے آتے ہوئے ایک چھوٹی عمارت سے ٹکرا گیا۔ حکام نے المیرک گاؤں میں طیارے کے گرنے کے مقام کا گھیراؤ کر لیا۔ یہ گاؤں آلماتے ہوائی اڈے کے رن وے کے نزدیک واقع ہے۔