مغربی افریقا میں یونانی ٹینکر پر مسلح افراد کا حملہ، عملہ کے 8 ارکان اغوا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

براعظم افریقا کے مغرب میں واقع ملک کیمرون کی ساحلی حدود میں مسلح افراد نے یونان کے پرچم بردار ایک ٹینکر پر حملہ کیا ہے اور اس کے عملہ کے 28 میں سے آٹھ ارکان کو اغوا کر لیا ہے۔یونانی حکام نے منگل کے روز اس ٹینکر کے اغوا ہونے کی اطلاع دی ہے اوربتایا ہے کہ ان کے حملے میں عملہ کا ایک رکن زخمی ہوگیا ہے۔

ساحلی محافظوں نے ایک بیان میں کہا ہے کہ اس ٹینکر پر لیمبوہ کی بندرگاہ سے دو ناٹیکل میل دور منگل کی صبح حملہ کیا گیا ہے۔اس وقت یونان کا پرچم بردار ٹینکر’ہیپی لیڈی‘ لنگرانداز ہونے کے لیے بندرگاہ کی جانب بڑھ رہا تھا۔

اس ٹینکر کے اغوا کیے گئے عملہ کے آٹھ ارکان میں سے پانچ کا تعلق یونان سے ہے، دو فلپائنی اور دو یوکرینی شہری ہیں۔تاہم ساحلی محافظوں نے زخمی ہونے والے یونانی کی صحت کے بارے میں کوئی تفصیل نہیں بتائی ہے۔

کوسٹ گارڈ نے یہ بھی نہیں بتایا کہ آیا اغوا کاروں نے جہاز کی مالک کمپنی سے کسی قسم کے تاوان کا بھی مطالبہ کیا ہے۔واضح رہے کہ مغربی افریقا کے پانیوں میں تیل بردار اور مال بردار تجارتی بحری جہازوں کوقزاق تاوان کے لیے اغوا کرتے رہتے ہیں۔

یونانی ٹینکر ہیپی لیڈی 183 میٹر (600 فٹ) طویل ہے۔ یہ کیمیکلز یا تیل کی مصنوعات کی حمل ونقل کے لیے ڈیزائن اور تیارکیا گیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں