.

شہزادہ خالد بن سلمان کا مارک ایسپر سے امریکا اور سعودی عرب کو درپیش چیلنجز پرتبادلہ خیال

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے نائب وزیردفاع شہزادہ خالد بن سلمان نے امریکی وزیر دفاع مارک ایسپر سے ملاقات کی ہے اور ان سے دونوں ملکوں کو درپیش چیلنجز اور ان کے درمیان جاری فوجی تعاون کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا ہے۔

شہزادہ خالد نے اس ملاقات کے بعد منگل کے روز ایک ٹویٹ میں کہا ہے کہ ’’انھوں نے مارک ایسپر سے ملاقات میں ہمارے (دونوں ملکوں کے) درمیان جاری فوجی تعاون کی اہمیت پر زوردیا ہے کیونکہ یہ علاقائی اور بین الاقوامی سلامتی کے لیے بھی اہمیت کا حامل ہے۔‘‘

شہزادہ خالد نے قبل ازیں واشنگٹن میں امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو سے ملاقات کی تھی اور ان سے مشرقِ اوسط کے خطے میں رونما ہونے والے حالیہ واقعات اور بین الاقوامی استحکام کو برقرار رکھنے کے لیے کوششوں کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا تھا۔

شہزادہ خالد بن سلمان ایرانی میجر جنرل قاسم سلیمانی کی بغداد میں تین جنوری کو امریکا کے ایک ڈرون حملے میں ہلاکت کے بعد سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کی ہدایت پر واشنگٹن کا یہ سرکاری دورہ کررہے ہیں۔اس کے بعد وہ برطانیہ کے سرکاری دورے پر جارہے ہیں۔ سعودی عرب اس وقت امریکا اور ایران میں جاری کشیدگی میں کمی کے لیے سفارتی اور سیاسی کوششیں کررہا ہے۔