.

داعش نے نیجر میں فوجی اڈے پر حملے کی ذمے داری قبول کر لی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مغربی افریقا میں داعش سے وابستہ گروپ نے گذشتہ ہفتے نیجر میں ایک فوجی اڈے پر خونیں حملے کی ذمے داری قبول کر لی ہے۔اس حملے میں نواسی نیجری فوجی ہلاک ہوگئے تھے۔

انتہا پسند مسلح گروپوں کی آن لائن سرگرمیوں کی نگران کرنے والے سائٹ انٹیلی جنس گروپ نے داعش صوبہ مغربی افریقا (اسواپ) کا ایک بیان نقل کیا ہے جس میں اس نے اس حملے کی ذمے داری قبول کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔

داعش نے اس بیان میں دعویٰ کیا ہے کہ اس کے جنگجوؤں نے مالی کی سرحد کے نزدیک واقع قصبے شیناگودرار میں نیجر کے فوجی بیس پرگذشتہ جمعرات کو حملہ کیا تھا اوراس میں ایک سو فوجیوں کو ہلاک اور لاتعداد کو زخمی کردیا تھا۔