.

بازووں سے محروم میکسیکین دوشیزہ ملکہ حسن کےمقابلہ میں شامل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عام طور پرمقابلہ حسن میں شامل دو شیزائیں اپنے جسمانی خدو خال پر فخر کا اظہار کرتے ہوئے عالمی مقابلوں میں حصہ لیتی ہیں مگر میکسکو کی ایک حسینہ پیدائشی طور پر دونوں بازوئوں سے محروم ہونے کے باوجود ملکہ حسن کے انتخاب کے لیے قسمت آزمائی کررہی ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق میکسیکو کی 24 سالہ ماڈل انا گیبریلا مولینا کو امید ہے کہ وہ اپنے آبائی شہر ویراکروزمیں ہونے والے ملکہ حسن کے مقابلے میں کامیاب ہوجائیں گی۔

چوبیس سالہ مولینا علم نفسیات میں گریجویٹ ہیں۔ ہفتے کو ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ اس کی جسمانی حالت میں شاید اسے مقابلہ حسن کے لیے موزوں نہ سمجھا جائے مگر وہ معذوروں کے لیے ایک مثال قائم کرنا چاہتی ہیں.

ماڈل کا کہنا تھا کہ میں نے اپنی ساری زندگی میں خود سے پیش آنے والی ہرمشکل پر قابو پالیا۔ وہ بازوئوں سے محروم ہونے کے باوجود کھانا کھانے، موبائل فون کے استعمال اور لکھنے میں اسے کوئی دقت پیش نہیں آتی۔ وہ یہ سارے کام اپنے پائوں سے کرتی ہیں۔

خیال کیا جاتا ہے کہ مارچ میں مولینا نے ویرکروز میں مقابلہ حسن میں حصہ لیں گی۔ خلیج میکسیکو کے کنارے ملک کی 80 لاکھ آبادی میں کسی معذور لڑکی کا مقابلہ حسن میں حصہ لینے کا پہلا واقعہ ہے۔

اگر وہ جیت جاتی ہے تو وہ جون میں ہونے والی مس میکسیکو مقابلے کے لیے کوالیفائی کرے گی۔