.

سعودی عرب میں رضاکارانہ سرگرمیوں میں مکہ مکرمہ سرفہرست

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں سرکاری اعداد و شمار کے مطابق گذشتہ برس 2019 کے دوران رضاکاروں کی سب سے زیادہ تعداد مکہ مکرمہ صوبے میں سامنے آئی۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کی رپورٹ میں یہ بات سعودی وزیر برائے محنت و سماجی بہبود کے نائب ماجد الغانمی کے حوالے سے بتائی گئی۔ تفصیلات کے مطابق ویژن 2030 پروگرام کے تحت سال 2019 کے لیے 120,000 رضاکاروں کا ہدف مقرر کیا گیا تھا۔ تاہم رضاکاروں کی حقیقی تعداد مقررہ ہدف سے بڑھ کر 192,448 تک پہنچ گئی۔

شعبوں کے لحاظ سے 67% رضاکاروں کا تعلق عمومی خدمات کے میدان سے رہا، 21% کا تعلق مختلف مہارتوں کے رضاکارانہ شعبوں سے اور 12% کا تعلق پیشہ وارانہ نوعیت کے رضاکارانہ شعبوں سے رہا۔

دورانیے کے لحاظ سے گذشتہ برس 18,735,625 گھنٹوں کی رضاکارانہ سرگرمیوں کو یقینی بنایا گیا۔

ماجد الغانمی کے مطابق مملکت میں رضاکاروں کی تعداد کے لحاظ سے مکہ مکرمہ صوبہ پہلے نمبر پر رہا۔ اس کے بعد مدینہ منورہ صوبہ دوسرے اور ریاض صوبہ تیسرے نمبر پر آیا۔ نائب وزیر نے بتایا کہ رضاکاروں میں سے 98% افراد رضاکارانہ کام کے تجربے کو دہرانے کے خواہش مند ہیں۔

رضاکارانہ کام کے میدان میں مقررہ اہداف کے حصول کو یقینی بنانے میں متعدد سرکاری اداروں اور غیر منافع بخش اداروں نے بھرپور کردار ادا کیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں