.

سوڈان،اسرائیل میں تعلقات معمول پرلانے کا عمل آغاز کردیا: نیتن یاہو

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اسرائیلی وزیراعظم بنیامین نیتن یاہو نے کہا ہے کہ انھوں نے سوڈان کی خود مختار کونسل کے سربراہ جنرل عبدالفتاح البرہان سے ملاقات کی ہے اور انھوں نے دونوں ملکوں کے درمیان دوطرفہ تعلقات کو معمول پر لانے کے کا عمل آغاز کردیا ہے۔

نیتن یاہو نے سوموار کو ٹویٹر پر جنرل عبدالفتاح البرہان سے اس ملاقات کی اطلاع دی ہے۔ یہ ملاقات ان کے یوگنڈا کے دورے کے موقع پر ہوئی ہے۔ وہ افریقی ممالک کے ساتھ اسرائیل کے تعلقات مضبوط بنانے کے لیے یہ دورہ کررہے ہیں۔

نیتن یاہو نے کہا کہ ان کا ملک ’’بڑے طریقے‘‘ سے افریقا کی جانب دوبارہ لوٹ رہا ہے۔انھوں نے یوگنڈا پر زوردیا ہے کہ وہ مقبوضہ بیت المقدس میں اپنا سفارت خانہ کھولے۔

قبل ازیں انھوں نے اسرائیل سے یوگنڈا روانہ ہوتے وقت ’’بہت اہم سفارتی ، اقتصادی اور سکیورٹی تعلقات‘‘ کے بارے میں گفتگو کی تھی جو ان کے بہ قول ابھی استوار ہونا ہیں مگر انھوں نے یہ کہا تھا کہ ’’مشرقی افریقا میں واقع یوگنڈا کے دورے کے اختتام پر اسرائیل کے لیے بہت اچھی خبر متوقع ہے۔‘‘