.

لیبیا کی پارلیمنٹ کا فائز السراج اور ایردوآن کے خلاف قانونی چارہ جوئی کا ارادہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

لیبیا میں دفاع اور قومی سلامتی سے متعلق پارلیمانی کمیٹی کے سربراہ طلال المیہوب نے باور کرایا ہے کہ پارلیمنٹ لیبیا میں صدارتی کونسل کے سربراہ فائز السراج اور ترکی کے صدر رجب طیب ایردوآن کے خلاف سلامتی کونسل میں قانونی کارروائی کا ارادہ رکھتی ہے۔

المیہوب کے مطابق دونوں شخصیات پر شامی جنگجوؤں کی بھرتی اور لیبیا منتقلی کے الزامات عائد کیے جائیں گے۔ یہ بھرتی اور منتقلی برلن کانفرنس کے نتائج، فائر بندی اور لیبیا میں غیر ملکی مداخلت روک دینے کے وعدوں کی کھلی خلاف ورزی ہے۔

اس سے قبل انقرہ نے لیبیا میں وفاق حکومت کی سپورٹ کے سلسلے میں شامی جنگجوؤں اور عسکری ساز و سامان بھیجنے کی رفتار بڑھا دی تھی۔ گذشتہ چند روز کے دوران ترکی کا ایک بحری جہاز بکتربند گاڑیاں لے کر طرابلس کی بندرگاہ پہنچا تھا جہاں اس نے تمام ساز و سامان اتار دیا۔ اسی دوران شامی اجرتی جنگجوؤں کی ایک بڑی تعداد اور ترک افسران بھی لیبیا پہنچے۔