طرابلس : وفاق حکومت کی فورسز کے اسلحہ خانوں پر لیبیا کی فوج کی شدید گولہ باری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

لیبیا میں خلیفہ حفتر کے زیر قیادت نیشنل آرمی کا کہنا ہے کہ اس نے پیر اور منگل کی درمیانی شب دارالحکومت طرابلس کے جنوب میں واقع علاقے الکریمیہ میں وفاق حکومت کی فورسز کی ہمنوا ملسح ملیشیاؤں کے ہتھیاروں کے گوداموں کو بم باری کا نشانہ بنایا۔

سوشل میڈیا پر بھی طرابلس کے نزدیک توپوں کی گولہ باری کے نتیجے میں زور دار دھماکے سنائی دینے کے بارے میں بات کی گئی۔ اس گولہ باری کے سبب متعدد محلوں میں بجلی کی فراہمی منقطع ہو گئی۔

دارالحکومت طرابلس میں متبادل جھڑپیں فریقین کے درمیان دستخط کیے گئے جنگ بندی کے معاہدے کی دھجیاں اڑا رہی ہیں۔ عالمی برادری اس معاہدے کو دائمی اور جامع فائر بندی میں تبدیل کرنے کے لیے کوشاں ہے۔ طرابلس کی میدانی صورت حال لیبیا کے سیاسی منظرنامے کو بھی متاثر کر رہی ہے۔ دونوں متحارب فریق اپنی شرائط پر ڈٹی ہوئی ہیں اور دونوں کے بیچ اعتماد کی صورت حال خراب ہوتی جا رہی ہے۔ ساتھ ہی مسلح ملیشیائیں بھی اقوام متحدہ کی قرار دادوں پر مستحکم طور عمل درامد میں رکاوٹ بن رہی ہیں

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں