.

امریکی فوڈ اینڈ ڈرگ اتھارٹی کی جانب سے سعودی کھجوروں پر پابندی کی حقیقت ؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں "نیشنل سینٹر فار پام اینڈ ڈیٹس" نے میڈیا اور سوشل میڈیا کے متعدد پلیٹ فارمز پر زیر گردش اُن رپورٹوں کی تردید کی ہے جس میں کہا گیا کہ امریکی فوڈ اینڈ ڈرگ اتھارٹی نے سعودی کھجوروں کی درآمد پر پابندی عائد کر دی ہے۔

سعودی مرکز کی جانب سے اتوار کے روز جاری ایک بیان میں واضح کیا گیا ہے کہ امریکی فوڈ اینڈ ڈرگ اتھارٹی اپنی ویب سائٹ پر اُن تمام کمپنیوں کے ناموں کی فہرست جاری کرتی ہے جو اتھارٹی کے مقرر کردہ ضوابط اور شرائط کو لاگو نہیں کرتیں۔ یہ فہرست ممالک کے مطابق جاری کی جاتی ہے۔ اسی طرح امریکی اتھارٹی تمام کمپنیوں سے مطالبہ کرتی ہے کہ وہ اتھارٹی کو معیار کو برقرار رکھنے کے اقدامات سے آگاہ کر کے اپنا نام فہرست سے خارج کروانے کی درخواست دیں۔

سعودی مرکز نے واضح کیا کہ امریکی اتھارٹی کی تازہ رپورٹ کے مطابق ایک سعودی کمپنی کے کسی نمونے میں کیڑے مار دواؤں کے اثرات باقی رہ گئے تھے اور یہ واقعہ 2009 کا ہے۔

سعودی مرکز نے زور دے کر کہا کہ وہ متعلقہ اداروں کے ساتھ مل کر کام کر رہا ہے تا کہ مقامی منڈیوں میں فروخت ہونے والی یا برآمد ہونے والی کھجوروں کے تحفظ کے معیار کو عمومی صورت میں بلند کیا جا سکے۔ مرکز نے اس امید کا اظہار کیا کہ امریکی اتھارٹی کی رپورٹ میں جن کمپنیوں کے ناموں کا ذکر ہے وہ اتھارٹی کے پاس اپنے ڈیٹا کو اپ ڈیٹ کرا لیں۔ بالخصوص جب کہ زیادہ تر ڈیٹا 2009 کا ہے۔