.

کرونا وائرس کی وجہ سے اٹلی میں تعلیمی نظام ٹھپ ہونے کا خدشہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

کرونا وائرس کے باعث اٹلی کے شہریوں کے بڑے پیمانے پر متاثر ہونے کے بعد ملک بھر میں تعلیمی نظام کے درہم برہم ہونے جا رہا ہے۔

اطالوی خبر رساں ایجنسی 'اے این ایس اے' کے مطابق حکومت نے یورپ میں کرونا وائرس کے بدترین پھیلاؤ پر قابو پانے کی تازہ ترین کوششوں میں مارچ کے وسط تک ملک بھر میں اسکول اور یونیورسٹیاں بند رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔

یہ بات اس وقت سامنے آئی جب اطالوی وزیر تعلیم لوسیا آزولینا نے کہا کہ کرونا وائرس کی وجہ سے اسکول اور یونیورسٹیاں بند کرنے کا ابھی کوئی فیصلہ نہیں کیا گیا ہے۔ وزیر تعلیم کا تبصرہ وائرس سے نمٹنے کے لیے نئے اقدامات پر تبادلہ خیال کرنے کےحوالے سے کابینہ کے اجلاس کے بعد سامنے آئے ہیں۔

اطالوی حکومت نے تقریبا 10 روز قبل ملک کے شمال میں کرونا سے متاثرہ علاقوں میں اسکول اور کالج بند کر دیئے تھے۔ حکومت کے تمام تر حفاظتی اقدامات کے باوجود کرونا وائرس پھیلتا چلا گیا۔ اب تک اٹلی میں کرونا کے باعث ایک سو افراد کی موت کی تصدیق ہو گئی ہے جب کہ 2500 افراد اس وقت کرونا کا شکار ہونے کے بعد اسپتالوں میں زیرعلاج ہیں۔