.

چین اور جنوبی کوریا میں کرونا کے سبب اموات اور متاثرین میں اضافہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

چین میں پیر کے روز کرونا وائرس سے مزید 22 افراد کی وفات ریکارڈ کی گئی ہے۔ ان میں 21 اموات ہوبی صوبے میں ہوئیں۔ اس طرح چین میں کرونا وائرس سے فوت ہونے والے افراد کی مجموعی تعداد 3119 تک پہنچ گئی ہے۔

چین کی وزارت صحت نے ہوبائی صوبے میں کرونا کے 40 نئے کیسوں کا انکشاف کیا ہے۔ اس طرح چین میں اس مہلک وائرس سے متاثر ہونے والے افراد کی مجموعی تعداد 80700 ہو گئی۔

ادھر شنگھائی ڈزنی لینڈ نے اعلان کیا ہے کہ وہ اپنے تفریحی مقام پر محدود پیمانے پر سرگرمیوں کو دوبارہ شروع کرنے والا ہے۔ البتہ اس تفریحی شہر کا مرکزی حصہ بند رہے گا۔ یاد رہے کہ کرونا وائرس کے پھیلاؤ کے اندیشے کے سبب شنگھائی ڈزنی لینڈ 25 جنوری کو بند کر دیا گیا تھا۔

چین اور اطالیہ کے بعد دنیا میں کرونا وائرس سے سب سے زیادہ متاثر ہونے والے ملک جنوبی کوریا میں حکام نے پیر کے روز بتایا ہے کہ کرونا وائرس سے متاثر ہونے والے افراد کی تازہ ترین یومیہ تعداد گذشتہ دو ہفتوں کے دوران سامنے آنے والی کم ترین تعداد ہے۔ جنوبی کوریا میں صحت کے حکام نے اتوار کے روز کرونا وائرس کے 248 نئے کیس ریکارڈ کیے۔ اس طرح ملک میں اس وائرس سے متاثر ہونے والے افراد کی مجموعی تعداد 7382 ہو گئی ہے۔

جنوبی کوریا میں اب تک کرونا وائرس کے سبب 51 افراد کی موت واقع ہو چکی ہے۔

فرانس میں حکام نے ایسے تمام اجتماعات پر پابندی عائد کر دی ہے جن میں ایک ہزار سے زیادہ افراد کی شرکت متوقع ہو۔ اس سے قبل صحت سے متعلق حکام نے اتوار کے روز کرونا سے تین مزید افراد کی وفات اور متاثرہ افراد کی تعداد میں اضافے کا اعلان کیا۔

اتوار کے اعلان کے بعد فرانس میں کرونا کے سبب فوت ہونے والے افراد کی تعداد 19 تک پہنچ گئی ہے۔ صحت عامہ کے ذمے داران کے مطابق ملک میں کرونا وائرس کے تصدیق شدہ کیسوں کی تعداد 1126 ہو چکی ہے۔