.

قطر میں ایک دن میں کرونا وائرس کے 238 کیسوں کی تصدیق

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

قطر نے ایک دن میں کرونا وائرس کے 238 نئے کیسوں کی تصدیق کی ہے۔ یہ تمام افراد تارکینِ وطن ہیں اور قطر کی خبررساں ایجنسی کے مطابق انھوں نے اسی ہفتے کے اوائل میں اعلان کردہ تین مریضوں کے ساتھ میل جول رکھا تھا۔

قطر کی وزارتِ صحت کے مطابق یہ تمام افراد بھی اسی اقامتی کمپاؤنڈ میں رہ رہے ہیں جس میں کرونا وائرس کا شکار مذکورہ تین افراد رہ رہے ہیں۔

بیان میں کہا گیا ہے:’’وزارتِ صحتِ عامہ یہ وضاحت کرتی ہے کہ نئے رجسٹر کیے گئے کیسوں کو کرونا کیس کا شکار ہونے والے پہلے تین مریضوں کی تصدیق کے بعد حفظ ماتقدم کے طور پر طبّی تنہائی اختیار کرنا چاہیے تھی۔‘‘

قطر نے گذشتہ سوموار کو چودہ ممالک سے آنے والے افراد کے ملک میں داخلے پر پابندی لگا دی تھی۔ان ممالک میں چین ، مصر ، بھارت ، ایران ، عراق ، لبنان ، بنگلہ دیش ، نیپال ، پاکستان ، فلپائن ، جنوبی کوریا، سری لنکا، شام اور تھائی لینڈ شامل ہیں۔اس سے پہلے قطر ائیر ویز نے اٹلی کے لیے اپنی تمام پروازیں معطل کردی تھیں۔

قطر نے 29 فروری کو کرونا وائرس کے پہلے کیس کی اطلاع دی تھی۔ یہ قطری شہری ایران سے لوٹا تھا۔ قطر نے ایران میں کرونا وائرس پھیلنے کے بعد وہاں سے اپنے تمام شہریوں کو نکال لیا ہے۔

عالمی ادارہ صحت ( ڈبلیو ایچ او) نے بدھ کو دنیا میں پھیلنے والے نئے کرونا وائرس سے لاحق مرض کو وبائی قرار دے دیا ہے۔ڈبلیو ایچ او کے سربراہ تيدروس أدهانوم غيبريسوس کا کہنا ہے کہ ’’اس سے پہلے کبھی کرونا وائرس کو وبائی مرض کی طرح پھیلتے ہوئے نہیں دیکھا ہے۔‘‘

چین میں 19دسمبر سے پھیلنے والے مہلک وائرس کرونا سے دنیا بھر میں گذشتہ دو ماہ اور بیس دن میں 4600 سے زیادہ اموات ہوچکی ہیں اور 126,000 افراد متاثر ہوئے ہیں۔ان مہلوکین اور متاثرین کا تعلق دنیا کے 114 ممالک سے ہے۔پاکستان میں 26 فروری کے بعد کرونا کا شکار ہونے والے 21 کیسوں کی تصدیق کی گئی ہے۔