.

امریکی صدر ٹرمپ کا کرونا وائرس کا ٹیسٹ ، اب نتیجے کے منتظر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کرونا وائرس کا ٹیسٹ کرانے کی تصدیق کی ہے اور کہا ہے کہ وہ اب دو ایک دن میں اس کے نتیجے کے منتظر ہیں۔

انھوں نے ہفتے کے روز صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کا جمعہ کی شب کرونا وائرس کا ٹیسٹ ہوا تھا۔ان کا جسمانی درجہ حرارت بالکل معمول کے مطابق تھا۔انھوں نے لوگوں کے ساتھ اپنے مصافحہ کا دفاع کیا ہے۔

صدر ٹرمپ نے جمعہ کو کہا تھا کہ وہ کرونا وائرس کا ٹیسٹ کرائیں گے۔وائٹ ہاؤس کے مطابق امریکی صدر حالیہ دنوں میں کرونا وائرس کا شکار ہونے والے متعدد افراد سے رابطے میں رہے ہیں۔

دریں اثناء وائٹ ہاؤس نے کہا ہے کہ مہلک کرونا وائرس سے بچاؤ کے لیے حفظ ماتقدم کے طور پر صدر ٹرمپ اور نائب صدر مائیک پینس سے قریبی ربط وتعلق رکھنے والے تمام افراد کا جسمانی درجہ حرارت چیک کیا جارہا ہے۔وائٹ ہاؤس میں صدر ٹرمپ کی بریفنگ میں شرکت کے لیے آنے والے صحافیوں کا بھی درجہ حرارت چیک کیا گیا ہے۔

امریکی صدر سے گذشتہ ہفتے سے یہ کہا جارہا ہے کہ وہ لوگوں سےگھل مل رہے ہیں،اس لیے وہ کرونا وائرس کا ٹیسٹ کروالیں۔مبادا وہ بھی اس مہلک وائرس کا شکار ہوں لیکن انھوں نے گذشتہ منگل کو یہ ٹیسٹ کرانے سے انکار کردیا تھا اور بتایا تھا ’’وائٹ ہاؤس کے معالج نے میرا طبّی معائنہ کیا ہے،مجھ میں کرونا وائرس کی کوئی علامات نہیں پائی گئی ہیں۔مجھے جب کرونا نہیں تو پھراس کے ٹیسٹ کی بھی ضرورت نہیں ہے۔‘‘

انھوں نے کہا کہ ’’میرا نہیں خیال کہ یہ (ٹیسٹ) کوئی بڑا معاملہ ہے،میں یہ کرواؤں گا لیکن میں اس کی کوئی وجہ نہیں جانتا ہوں۔میں بالکل ٹھیک ٹھاک ہوں اور خود کو بھلا چنگا محسوس کرتا ہوں۔‘‘