.

خاتون ترجمان اسٹیفنی گریشم کرونا وائرس سے متاثر نہیں ہوئیں : وائٹ ہاؤس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

وائٹ ہاؤس کی جانب سے ایک اعلان میں بتایا گیا ہے کہ اس کی ایک خاتون ترجمان اسٹیفنی گریشم کے ٹیسٹ سے یہ بات ثابت ہو گئی ہے کہ وہ کرونا وائرس سے متاثر نہیں ہوئیں۔ وائٹ ہاؤس کے مطابق اسٹیفنی بدھ سے اپنے کام پر لوٹ آئیں گی۔ واضح رہے کہ رواں ماہ ایک برازیلی عہدے دار کے ساتھ ملاقات کے بعد سے اسٹیفنی خود سے قرنطینہ (طبّی قید) میں رہ رہی ہیں۔

رواں ماہ سات مارچ کو فلوریڈا میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے برازیلی ہم منصب جائر پولسونارو اور ان کے ہمراہ آنے والے وفد کا استقبال کیا تھا۔ اس موقع پر سینئر معاون اسٹیفنی گریشم امریکی صدر کے ساتھ موجود تھیں۔ اس دوران ایک تصویر میں ٹرمپ کو برازیلی میڈیا مشیر کے برابر میں کھڑا ہوا دیکھا گیا۔ بعد ازاں ٹیسٹ سے ثابت ہوا کہ ٹرمپ کرونا وائرس سے متاثر نہیں ہیں۔

کرونا وائرس کے وائٹ ہاؤس منتقل ہونے کے خطرے کے پیشِ نظر اسٹیفنی گریشم (امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور ان کی اہلیہ میلانیا کی میڈیا مشیر) نے 17 مارچ کو اعلان کیا تھا کہ وہ اب اپنے گھر میں رہ کر کام کریں گی۔ اسٹیفنی کے مطابق ان کا برازیلی صدر کے میڈیا مشیر کے ساتھ میل جول رہا تھا۔ بعد ازاں یہ بات ثابت ہوئی کہ مذکورہ مشیر کرونا وائرس سے متاثر ہو چکا ہے۔