.

کرونا وائرس کے سبب عالمی سیاحت میں 30% کی کمی، متوقع خسارہ 450 ارب ڈالر

سیاحت کے سیکٹر میں لاکھوں ملازمتیں خطرے میں پڑ گئیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عالمی سیاحت کی تنظیموں نے توقع ظاہر کی ہے کہ کرونا وائرس کے سبب رواں سال 2020 میں دنیا بھر میں سیاحوں کی تعداد میں 20% سے 30% تک کی کمی آئے گی۔

اس حوالے سے اقوام متحدہ کی خصوصی ایجنسی کا کہنا ہے کہ سیاحتی سیکٹر کی آمدنی میں 300 سے 450 ارب ڈالر کی کمی متوقع ہے۔ عربی روزنامے الاقتصادیہ کے مطابق یہ رقم سال 2019 میں اس سیکٹر کی مجموعی آمدنی کا ایک تہائی حصہ بنتا ہے۔ گذشتہ سال مجموعی آمدنی کا حجم 15 کھرب ڈالر تھا۔

مذکورہ ایجنسی کے سکریٹری جنرل زوراپ بولوکیکاشویلی کے مطابق سیاحت کا شعبہ کرونا وائرس سے سب سے زیادہ متاثر ہونے والے اقتصادی سیکٹروں میں سے ہے۔ اس شعبے میں لاکھوں افراد کی ملازمتوں کو خطرہ لاحق ہے۔

ایجنسی نے رواں برس کے آغاز پر توقع ظاہر کی تھی کہ عالمی سیاحت کے شعبے میں 3% سے 4% کی نمو دیکھی جائے گی۔ تاہم کرونا وائرس کے تیزی سے پھیلاؤ کے سبب ایجنسی نے اپنا موقف تبدیل کرتے ہوئے کہا کہ رواں سال اس شعبے میں 1% سے 3% تک کمی متوقع ہے۔