.

بیرون ملک پھنسے سعودی شہریوں کے پہلے قافلے کی وطن واپسی

جمعہ کے روز خصوصی پرواز سے 250 سعودی شہری انڈونیشیا سے وطن واپس پہنچ گئے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

کرونا وائرس کی وباء پھیلنے کے بعد بیرون ملک پھنسے سعودی عرب کے شہریوں کی واپسی کا عمل شروع ہوگیا ہے۔ گذشتہ روز جمہوریہ انڈونیشیا سے سعودی شہریوں کے ایک گروپ کو خصوصی پرواز کے ذریعے وطن واپس پہنچایا گیا۔ کرونا کی وجہ سے بیرون ملک پھنسے سعودی شہریوں کا یہ پہلا قافلہ ہے جو ملک میں واپس پہنچا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق بیرون ملک پھنسے شہریوں کو عزت وتکریم کے ساتھ واپس لایا گیا جہاں الریاض کے ہوائی اڈے پر وزارت خارجہ، وزارت سیاحت، وزارت صحت اور شہری ہوا بازی کی جنرل اتھارٹی کے نمائندوں نے ان کا استقبال کیا۔

سعودی پریس ایجنسی (ایس پی اے) کے مطابق سعودی عرب ایئر لائن کا طیارہ جمعہ کی صبح انڈونیشیا کے دارالحکومت جکارتہ سے 250 سعودی شہریوں کو لے کر ریاض کے شاہ خالد بین الاقوامی ہوائی اڈے پر پہنچا۔ اس موقعے پر سعودی محکمہ صحت کے حکام موجود تھے جنہوں نے بیرون ملک سے آنے والے مسافروں کا طبی معائنہ کیا۔

قبل ازیں انڈونیشیا میں موجود شہریوں کو سعودی عرب روانگی کے وقت جکارتا میں متعین سعودی عرب کے سفیر عصام عابدالثقفی نے الوداع کیا۔ انڈونیشیا میں پھنسے سعودی شہریوں کی وطن واپسی کے انتظامات سعودی حکومت کی طرف سے کرونا وائرس کی وجہ سے پیدا ہونے والی صورت حال کے تناظر میں قائم کردہ کرائسز سیل کی جانب سے کیے گئے تھے۔