.

سعودی عرب: کروناوائرس کے1351نئے کیسوں کی تشخیص، کل تعداد 22753 ہوگئی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب میں گذشتہ 24 گھنٹے میں کرونا وائرس کے 1351 نئے کیسوں کی تصدیق کی ہے۔سعودی وزارت صحت کے ترجمان کے مطابق اب مملکت میں کرونا وائرس کے کل کیسوں کی تعداد 22753ہوگئی ہے۔

ترجمان ڈاکٹرمحمد العبدالعالی نے جمعرات کے روز بتایا ہے کہ کرونا وائرس کا شکار مزید پانچ افراد دم توڑ گئے ہیں اوراب وفات پانے والوں کی تعداد 162 ہوگئی ہے۔انھوں نے مزید بتایا ہے کہ نئے تشخیص شدہ کیسوں میں 83 فی صد غیر سعودی ہیں اور 17 فی صد سعودی شہری ہیں۔

سعودی وزارت صحت کی طبی ٹیمیں اس وقت ملک بھر میں اور بالخصوص شہروں کے گنجان آباد علاقوں میں مقیم افراد کے کرونا وائرس کے ٹیسٹ کررہی ہیں۔اس وجہ سے مملکت میں کرونا وائرس کے مریضوں کی تعداد میں حالیہ دنوں میں نمایاں اضافہ ہوا ہے۔تاہم وفات پانے والوں کی شرح بہت کم ہے اور اب تک کرونا وائرس کے شکار افراد میں ایک فی صد سے بھی کم کی موت ہوئی ہے جبکہ 14 فی صد صحت یاب ہوچکے ہیں۔

سعودی وزیر صحت ڈاکٹر توفیق الربیعہ نے اس ماہ کے اوائل میں چار ماہ مطالعات کی بنا پر کہا تھا کہ مملکت میں کرونا وائرس کے کیسوں کی تعداد 10 ہزار سے دو لاکھ کے درمیان ہوسکتی ہے۔

سعودی عرب نے کرونا وائرس کو پھیلنے سے روکنے کے لیے سخت اقدامات کیے ہیں اور بڑے شہروں میں کرفیو اورلاک ڈاؤن نافذ کیا تھا۔البتہ رمضان المبارک کے آغاز کے بعد سعودی حکومت نے شہروں میں نافذ کرفیو اور بعض پابندیوں میں نرمی کی ہے مگر مساجد بدستور باجماعت نمازوں کے لیے بند ہیں۔

سعودی حکومت نے صبح نو بجے سے شام پانچ بجے تک کرفیو میں نرمی کی ہے۔13 مئی تک مملکت بھر میں پرچون فروشوں کو اپنی دکانیں کھولنے کی اجازت دے دی گئی ہے۔ حکام نے شہریوں پر زور دیا ہے کہ وہ بلا ضرورت گھروں سے باہر نہیں نکلیں، چہرے پر ماسک پہن کر رکھیں ،جسمانی طور پرسماجی فاصلہ برقرار رکھیں اور عوامی مقامات پر اکٹھے ہونے سے گریز کریں۔انھیں یہ بھی ہدایت کی گئی ہے کہ وہ سرکاری اور نجی مقامات پر بڑی تعداد میں اکٹھے ہونے سے گریز کریں۔