.

ایران کا جوہری تنصیبات کے معائنے سے روکنا ناقابل قبول ہے:پومپیو

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی وزیرخارجہ مائیک پومپیو نے کہا ہے کہ ایران کا جوہری توانائی ایجنسی کے ماہرین اور معائنہ کاروں کو جوہری تنصیبات کی چھان بین سے روکنا ناقابل قبول اقدام ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق مائیکرو بلاگنگ ویب سائٹ ٹویٹر پر پوسٹ کردہ متعدد ٹویٹس میں امریکی وزیرخارجہ نے کہا کہ ایران نے اپنی دو جوہری تنصیبات تک عالمی جوہری توانائی ایجنسی (آئی اے ای اے) کے معائنہ کاروں کو رسائی سئ روک دیا۔ ایران کا یہ اقدام ناقابل قبول اور باعث تشویش ہے۔

قبل ازیں منگل کے روز امریکا نے سلامتی کونسل سے مطالبہ کیا تھا کہ وہ ایران کی مشکوک جوہری تنصیبات کے معائنہ کاری کے حوالے سے متفقہ موقف اختیار کرے۔

سلامتی کونسل کی طرف سے ٹویٹر پر پوسٹ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ امریکا عالمی توانائی ایجنسی کے ڈائریکٹر جنرل رافائیل گروسی کی طرف سے ایران سے جوہری تنصیبات کی معائنہ کاری کی اجازت سے متعلق مطالبے کی حمایت کرتا ہے۔ اقوام متحدہ کا کہنا ہے کہ ایران کی طرف سے جوہری سرگرمیوں کو مخفی رکھنے پر عالمی برادری کو متفقہ موقف اور لائحہ عمل اختیار کرنا چاہیے۔

خیال رہے کہ عالمی توانائی ایجنسی کے سربراہ نے ایران سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ جوہرہ معاہدے کے پروٹوکول کے مطابق عالمی ادارے کے معائنہ کاروں کو اپنی تمام جوہرہ تنصیبات تک رسائی اور معائنے کی مکمل اجازت فراہم کرے۔

مقبول خبریں اہم خبریں