.

صرف ایک صورت میں انتخابات ہاروں گا : ٹرمپ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا کہنا ہے کہ وہ سمجھتے ہیں کہ جو بائیڈن ،، ہیلری کلنٹن سے زیادہ کمزور امیدوار ہیں تاہم ڈیموکریٹس انہیں (ٹرمپ کو) شکست دینے کے حوالے سے زیادہ ہی پُر جوش ہیں۔

امریکی صدر نے یہ بات جمعرات کے روز The Washington Times کو دیے گئے ایک خصوصی انٹرویو میں کہی۔

ٹرمپ کے مطابق وہ معیشت کی ایک بھرپور بحالی پر یقین رکھتے ہیں۔ امریکی صدر نے کہا کہ وہ صرف اُس صورت میں شکست سے دوچار ہوں گے اگر انتخابات میں ووٹنگ MAIL کے ذریعے ہوئی۔ اس لیے کہ ایسی صورت میں ڈیموکریٹس کی جانب سے پیرا پھیری کی توقع ہے۔

ٹرمپ کا مزید کہنا تھا کہ "انتخابات تک ہمارے پاس چار ماہ ہیں .. ہم ہر آنے والے ماہ اوپر جائیں گے .. تیسری سہ ماہی کا نتیجہ انسانی تاریخ میں بلند ترین مجموعی مقامی پیداوار کی صورت میں سامنے آئے گا"۔

امریکی صدر نے کہا کہ "یقینا ڈیموکریٹس معیشت کو کھولنا نہیں چاہتے ،،، وہ وہ جہنم کی طرح لڑنے میں مصروف ہیں ،،، وہ نہیں چاہتے کہ میں ہفتے کے روز اجتماع کروں کیوں کہ یہ ایک بہت بڑا اجتماع ہو گا"۔

انتخابات کے حوالے سے ٹرمپ نے اپنے ایک بڑے اندیشے کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ "ای میل کے ذریعے ووٹنگ وہ واحد طریقہ ہے جس میں مجھے شکست ہو جائے گی اس لیے کہ ڈیموکریٹس دھوکہ دہی اور چوری کرتے ہیں۔ وہ متعین علاقوں میں بیلٹ کارڈز نہیں ارسال کرتے، ان میں زیادہ تر ریپبلکنز کے علاقے ہیں۔ بہت سی غیر قانونی ووٹنگ کا وجود ہے"۔

ٹرمپ کے مطابق سابق صدر باراک اوباما کو (روس کی جانب سے) جاسوسی کا علم تھا۔ اس لیے کہ صدر کی کرسی پر بیٹھا شخص ہر بات جانتا ہے۔ ٹرمپ نے امید ظاہر کی کہ اس سلسلے میں جاری حالیہ تحقیقات کے ذریعے حقیقت سامنے آ جائے گی۔