.

سعودی شہریوں کو نیوم میں مفت پلاٹ ملیں گے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے ساحلی علاقے میں معاوضے کے اہل شہریوں کو مملکت کے جدید سہولتوں سے مزیّن نئے شہری منصوبے نیوم میں مفت پلاٹ ملیں گے۔

سعودی پریس ایجنسی ( ایس پی اے) کے مطابق تبوک کے امیر شہزادہ فہد بن سلطان نے نیوم کے مکینوں کا معیار زندگی بہتر بنانے کے لیے معاشی پیکج کی پہلی قسط تقسیم کردی ہے۔

سعودی عرب بحیرہ احمر کی ساحلی پٹی کے ساتھ ساتھ نیوم شہر بسا رہا ہے۔سعودی عرب کے سرکاری سرمایہ کاری فنڈ نے اس کے لیے 500 ارب ڈالر کی رقم مختص کی ہے۔ یہ ماحول دوست منصوبہ پڑوسی ممالک مصر اور اردن کی سرحدوں تک پھیلا ہوا ہے اور یہاں جدید ٹیکنالوجی کو ہر شعبے میں بروئے کار لایا جارہا ہے۔

نیوم کا منصوبہ بھی سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کے پیش کردہ ویژن 2030ء کا حصہ ہے۔اس کا مقصد سعودی معیشت کو متنوع بنانا اور تیل کی آمدن پرانحصار کم کرنا ہے۔

توقع ہے کہ دنیا بھر سے مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والے دس لاکھ سے زیادہ ماہرین اس نئے شہر میں کام اور رہنے کے لیے آئیں گے۔