.

سعودی نائب وزیر دفاع خالد بن سلمان کی ایران کے لیے امریکی ایلچی سے ملاقات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی نائب وزیر دفاع شہزادہ خالد بن سلمان بن عبد العزیز نے اتوار کے روز ایران میں امریکی خصوصی مندوب برائن ہک سے ملاقات کی۔

ملاقات کے دوران انہوں نے دونوں ممالک کے مابین دوطرفہ تعلقات پر تبادلہ خیال کیا۔ خطے میں سلامتی اورامن کے تحفظ کی اہمیت پر زور دینے کے ساتھ عدم استحکام پیدا کرنے والی قوتوں کا مل کر مقابلہ کرنے کے عزم کا اعادہ کیا۔

سعودی نائب وزیر دفاع نے اس ملاقات کے دوران زور دے کر کہا کہ سعودی عرب خطے اور دنیا میں سلامتی اور امن کے قیام کے لیے امریکہ کے ساتھ شانہ بشانہ کام کر رہا ہے۔ خطے میں ایران کی تمام مذموم سرگرمیوں، بار بار کی جانے والی خلاف ورزیوں، دہشت گردی اور تخریبی کارروائیوں کو روکنے کے لیے امریکا کی انتھک کوشش کی حمایت کرتا ہے۔

دونوں رہ نمائوں نے ملاقات میں یمن کے حوثی باغیوں کی جانب سے میزائل اور ڈرون کے ذریعے سعودی عرب پر کیے جانے والے حملوں پر بھی تبادلہ خیال کیا۔ سعودی نائب وزیر دفاع نے کہا کہ یمن کے حوثی باغی ایرانی اسلحہ سے سعودی عرب کے عوام کو نشانہ بنا رہے ہیں۔ سعودی عرب کی مسلح محکمہ دفاع نے ایران کے متعدد ڈرون طیارے اور بیلسٹک میزائل مار گرائے ہیں۔

اس ملاقات کے دوران نائب وزیر دفاع نے کہا کہ سعودی قیادت نے مملکت میں دفاع کے لیے فوج اور دفاعی نظام بھیجنے پر امریکا کا شکریہ ادا کیا ہے۔