.

کرونا وائرس: ابو ظبی میں کووِڈ19 کی ویکسین کی تیسرے مرحلے میں آزمائش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ابوظبی سے تعلق رکھنے والی کمپنی کرونا وائرس کے علاج کی ویکسین کے پہلے مرحلے کی تیسری آزمائش کررہی ہے اور اس کے مریضوں پر اثرات کے نتائج کی جانچ کررہی ہے۔ابوظبی کی کمپنی نے یہ ویکیسن چین کے دواساز ادارے نیشنل بائیوٹیک گروپ ( سی این بی جی) کے ساتھ اشتراک سے تیار کی ہے۔

اس اشتراک عمل میں ابو ظبی سے تعلق رکھنے والی مصنوعی ذہانت کی کمپیوٹنگ کمپنی گروپ 42( جی 42) اور ابوظبی کا محکمہ صحت شامل ہیں۔

ابو ظبی کے میڈیا دفتر نے ایک بیان میں کہا ہے کہ ''ابوظبی کی جی 42 ہیلتھ کیئر، چین کی سائنو فارم سی این بی سی محکمہ صحت اور وزارت صحت کے انتظام میں نئی ویکسین کا آزمائشی تجربہ کررہی ہے۔ یہ ویکسین یو اے ای کے مکینوں کو فوری دستیاب ہوگی۔''

جی 42 نے اس آزمائشی تجربے کے بارے میں الگ سے ایک بیان جاری کیا ہےاور کہا ہے کہ یو اے ای کا جانچ کے لیے انتخاب اس کے تنوع کے پیش نظر کیا گیا ہے اور یہاں 200 سے زیادہ ممالک کے شہری رہتے ہیں۔

مختلف نسلوں سے تعلق رکھنے والے افراد پر ویکسین کے آزمائشی تجربے سے تحقیقی عمل کو تقویت ملے گی اور آزمائشی تجربات کی کامیابی کی صورت میں اس کا عالمی سطح پر اطلاق کیا جاسکے گا کیونکہ اس طرح اس کے قابل عمل ہونے کا ثبوت دستیاب ہوجائے گا۔

اس ویکسین کو پہلے مرحلے کے پروگرام میں 5000 رضاکاروں پر آزمایا جارہا ہے۔حکام نے اس میں حصہ لینے کے لیے 15 ہزار افراد کو اجازت نامے جاری کیے ہیں۔اس پہلے گروپ کو عجمان میں واقع شیخ خلیفہ میڈیکل سٹی میں آج جمعرات کو ویکسین لگائی جارہی ہے۔