.

وائٹ ہاؤس کی پریس سیکریٹری کو’جھوٹی بی‘نہیں کہا: الجزیرہ کی رپورٹر بیان سے انکاری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

الجزیرہ کی رپورٹر نے وائٹ ہاؤس کی پریس سیکریٹری کیلیح میکنانی کو ’’جھوٹی بی‘‘ کہنے سے متعلق رپورٹس کی تردید کردی ہے۔

الجزیرہ انگلش کی وائٹ ہاؤس کی رپورٹر کیمبرلی ہالکیٹ اور پریس سیکریٹری کے درمیان گذشتہ منگل کے روز تلخ جملوں کا تبادلہ ہوا تھا اور ان کی گرما گرم کفتگو کی وڈیو وائرل ہوئی تھی۔انھوں نے کہا ہے کہ انھوں نے میکنانی کو یہ نہیں کہا تھا کہ’’ تم ایک ’جھوٹی بی‘ ہوبلکہ اس کے بجائے یہ کہا تھا کہ ’’او کے اب آپ مزید گفتگو نہیں چاہتی ہیں۔‘‘

ان دونوں کے درمیان ہالکیٹ کے میکنانی سے امریکا میں صدارتی انتخابات میں غیرملکی مداخلت سے متعلق سوال پوچھنے پر گرما گرمی ہوئی تھی۔جب پریس سیکریٹری نے اس کا جواب دینا شروع کیا تو ہالکیٹ نے انھیں درمیان میں ٹوک دیا اور کہا کہ ’’یہ تو پٹڑی سے اترگئی ہے۔‘‘

اس کے بعد ماسک پہنے ہالکیٹ نے مزید سوال پوچھنے کی کوشش کی لیکن میکنانی نے انھیں روک دیا اور کہا کہ ’’ آپ پہلے ہی دو سوال پوچھ چکی ہیں اور یہ آپ کے دوسرے ساتھیوں سے زیادہ ہیں۔

سوشل میڈیا پر ان کے درمیان اس گفتگو پر تبصروں کا سلسلہ جاری ہے۔بعض صارفین کا کہنا ہے کہ انھوں نے الجزیرہ کی رپورٹر کو دونوں باتیں کہتے ہوئے سنا ہے۔تاہم ہالکیٹ نے ٹویٹر پر لکھا ہے کہ ’’بریفنگ سے متعلق بہت کچھ غلط رپورٹ ہواہے۔میں نے یہ کہا تھا کہ ٹھیک ہے آپ اب جواب نہیں دینا چاہتی ہیں۔‘‘

مگر ٹویٹر پر بہت سے صارفین نے ان کے اس مؤقف سے اتفاق نہیں کیا ہے اور ان کا کہنا ہے کہ انھوں نے دونوں ہی آوازیں سنی ہیں اور وہ یہ فیصلہ نہیں کر پارہے کہ ان میں درست کیا اور کون ہے۔تاہم میکنانی نے خود اس واقعے پر کوئی تبصرہ نہیں کیا ہے۔