.

کووِڈ-19 کے کیسوں میں اضافہ ،اموات میں کمی،وَبا بدستور پھیل رہی ہے: ڈبلیو ایچ او

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) نے کہا ہے کہ کووِڈ-19 کی وَبا بدستور پھیل رہی ہے لیکن عالمی سطح پر اس کے کیسوں اور اموات کی تعداد میں مجموعی طور پر کمی واقع ہوئی ہے۔ البتہ جنوب مشرقی ایشیا اور مشرقی بحر متوسط کے علاقے میں کووِڈ-19 کے کیسوں اور اموات میں اضافہ ہورہا ہے۔

ڈبلیو ایچ او نے کرونا وائرس سے متعلق اپنی نئی رپورٹ میں کہا ہے کہ امریکا اب تک اس وَبا سے سب سے زیادہ متاثر ہوا ہے۔گذشتہ ایک ہفتے کے دوران میں دنیا بھر میں رپورٹ ہونے والے تمام نئے کیسوں میں سے 50 فی صد براعظم امریکا سے تعلق رکھتے ہیں اور 39240 ہلاکتوں میں سے 62 فی صد براعظم امریکا ہی میں رپورٹ ہوئی ہیں۔

برطانوی خبررساں ایجنسی رائٹزر کے فراہم کردہ اعداد وشمار کے مطابق دنیا بھر میں منگل تک کرونا وائرس سے دو کروڑ 36 لاکھ 50 ہزار سے زیادہ افراد متاثر ہوئے ہیں۔ان میں سے 811895 وفات پا چکے ہیں۔

ڈبلیو ایچ او نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ 23 اگست کو ختم ہونے والے ہفتہ کے دوران میں کووِڈ-19 کے 17 لاکھ سے زیادہ نئے کیسوں اور 39 ہزار سے زیادہ نئی اموات کی ادارے کو اطلاع دی گئی ہے۔اس طرح اس سے گذشتہ ہفتے کے مقابلے میں عالمی سطح پر اس مہلک وائرس کے کیسوں کی تعداد میں چار فی صد اور ہلاکتوں کی تعداد میں 12 فی صد کمی واقع ہوئی ہے۔

عالمی ادارہ صحت کا کہنا ہے کہ امریکا کے بعد جنوب مشرقی ایشیا کا خطہ کووِڈ-19 سے سب سے زیادہ متاثر ہوا ہے۔اس خطے میں نئے کیسوں کی تعداد میں گذشتہ ہفتے کے مقابلے میں 28 فی صد اور اموات میں 15 فی صد اضافہ ہوا ہے۔بھارت میں مسلسل سب سے زیادہ کیس رپورٹ ہورہے ہیں اور اس کے پڑوسی ملک نیپال میں بھی یہ مہلک وائرس تیزی سے پھیل رہا ہے۔

ادارے کا کہنا ہے کہ بحر متوسط کے مشرق میں واقع خطے میں رپورٹ کیے گئے کیسوں کی تعداد میں چار فی صد اضافہ ہوا ہے لیکن گذشتہ چھے ہفتوں کے دوران میں اس خطے میں ہلاکتوں کی تعداد میں مسلسل کمی واقع ہوئی ہے۔لبنان ، تُونس اور اردن نے گذشتہ ہفتے کے مقابلے میں کرونا وائرس کے زیادہ کیسوں کی اطلاع دی ہے۔

افریقا بھر میں کرونا وائرس کے نئے کیسوں اور اموات کی تعداد میں بالترتیب 8 فی صد اور 11 فی صد کمی واقع ہوئی ہے۔اس کی بڑی وجہ یہ بیان کی گئی ہے کہ الجزائر ، کینیا ، گھانا، سینی گال اور جنوبی افریقا میں کیسوں کی تعداد میں کمی واقع ہوئی ہے۔

ڈبلیو ایچ او نے بیان میں مزید بتایا ہے کہ یورپی خطے میں گذشتہ تین ہفتے کے دوران میں کرونا وائرس کے تصدیق شدہ کیسوں کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہوا ہے۔تاہم گذشتہ ہفتے میں نئے کیسوں کی شرح میں صرف ایک فی صد کمی واقع ہوئی ہے۔یورپی خطے میں کووِڈ-19 سے ہونے والی اموات میں بھی مسلسل کمی واقع ہورہی ہے۔

ڈبلیو ایچ او کے مغربی بحرالکاہل کے خطے میں نئے کیسوں کی تعداد میں پانچ فی صد کمی واقع ہوئی ہے۔جاپان ، آسٹریلیا ، سنگاپور ، چین اور ویت نام میں کرونا وائرس کے نئے کیسوں کی تعداد کم ہوئی ہے ۔اب یہ مہلک وائرس ان ممالک میں کم رفتار سے پھیل رہا ہے۔تاہم جنوبی کوریا میں اس کے کیسوں کی تعداد میں 180 فی صد اضافہ ہوا ہے۔اس کی بڑی وجہ لوگوں کی کثیر تعداد میں مذہبی اجتماعات میں شرکت بتائی گئی ہے۔