.

یمن: ایرانی حمایت یافتہ حوثی جنگجوئوں کے فوج کے سامنے ہتھیار ڈالنے کی ویڈیو جاری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کے شمالی علاقے الجوف میں ایرانی حمایت یافتہ حوثی ملیشیا کی فوج کے ہاتھوں شکست کے بعد جنگجوئوں‌ کے ہتھیار ڈالنے ایک ویڈیو منظرعام پر آئی ہے جس میں حوثی باغیوں کوخود کو سرکاری فوج کے حوالے کرتے دیکھا جاسکتا ہے۔ ہتھیار ڈالنے کا یہ واقعہ الصبائغ محاذ پر پیش آیا۔

سبا میڈیا سینٹر کی طرف سے جاری کردہ فوٹیج میں حوثی باغیوں کو ہتھیار ڈالتے دیکھا جاسکتا ہے۔ ہتھیار ڈالنے سے قبل الصبائغ میں یمنی فوج نے قبائلی مزاحمت کاروں اور عرب اتحادی فوج کی معاونت سے حوثی ملیشیا کے خلاف ایک بڑا آپریشن شروع کیا تھا۔ فوجی کارروائی میں یمنی فوج نے پیش قدمی کرتے ہوئے متعدد اہم علاقے حوثی شدت پسندوں سے آزاد کرالیے۔

میڈیا سینٹر کے مطابق کم سے کم 27 حوثی جنگجوئوں نے فوج کے محاصرے میں آنے کے بعد ہتھیار پھینک دیے جب کہ 20 جنگجولڑائی میں ہلاک ہوگئے تھے۔ ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ گرفتار کیے گئے بعض حوثی شدت پسند زخمی ہیں جنہیں سرکاری فوج کی طرف سے طبی امداد فراہم کی جا رہی ہے۔

الصبائغ میں ہونے والی لڑائی میں حوثی باغیوں کا ایک اہم کمانڈر طارق حسن المعوضی المعروف ابو المسیرہ اپنے کئی ساتھیوں سمیت ہلاک ہوگیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں